Published From Aurangabad & Buldhana

کیا آپ آج سے شہاب ثاقب کی بارش دیکھنے کے لیے تیار ہیں!

شہروں کی روشنیوں سے دور، طلوع آفتاب سے دو گھنٹے پہلے ہندوستان اور دنیا بھر کے لوگ 28 مئی تک سالانہ شہاب ثاقب کی بارش کا نظارہ کرسکیں گے۔ اس کو Eta Aquarids کا نام دیا گیا ہے۔ یہ شہاب ثاقب کی بارش دمدار تارہ /سیارچہ کی مٹی کے ذرات ہیں جو کرہ ارض میں داخل ہوں گے۔ سالانہ شہاب ثاقب کی بارش بدھ کو 02.30 بجے شب اپنے عروج پر ہوگی۔ شہاب ثاقب کی بارش 28 مئی تک جاری رہے گی، عوام ہر دن انوکھا آسمانی نظارہ کرسکیں گے۔ پلینٹری سوسائٹی آف انڈیا کے ڈائرکٹر این سری رگھونندن کمار نے یہ بات بتائی۔

انٹرنیشنل میٹیور آرگنائزیشن کے مطابق ہر گھنٹہ ٹوٹا ہوا شہاب ثاقب آج دیکھا جاسکے گا۔ یہ تعداد ہر گزرتے دن کے ساتھ 28 مئی تک مختلف ہوگی کیونکہ زمین اپنے مدار میں دمدار ستارہ کے ملبہ سے گزرے گی۔ رگھونند کمار کا کہنا ہے کہ ان دنوں دنیا بھر کے لوگ کورونا کی وجہ سے تناؤ کا شکار ہیں اور آلودگی سے پاک آسمان سے متاثر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اپریل کے تیسرے ہفتہ میں صبح کے اوقات میں شہاب ثاقب کی بارش نے دنیا بھر کے لوگوں کی خوشی کو دوبالا کردیا ہے۔

پی ایس آئی کے ڈائرکٹر نے کہا کہ اہم بات یہ ہے کہ لوگ اُس وقت پُرجوش رہے جب انہیں ستارہ ہیلی سے نکلنے والی دھول کے غبار کے آغاز کا پتہ چلا۔ آئی ایم او کے مطابق زمین میں داخل ہونے والے سیارہ ہیلی کے ذرات کی رفتار آسمان میں 66 کیلومیٹر فی سکنڈ رہی۔ اس کا آغاز 4.30 بجے صبح آسمان کی مشرقی اور جنوب مشرقی سمت سے ہوا۔ سادہ آنکھ سے اس کا مشاہدہ کیا جاسکتا ہے اور ٹیلی اسکوپ یا نائینوکولرس کی ضرورت نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہیلی ستارہ شہاب ثاقب کا اصل ہے۔ ہر سال دو مرتبہ زمین، دھول کے بادل سے گزرتی ہے۔

یو این آئی

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!