Published From Aurangabad & Buldhana

مودی نے ممبئی سے دو وندے بھارت ٹرینوں کو دکھائی ہری جھنڈی

ممبئی : وزیر اعظم نریندر مودی نے ممبئی کے چھترپتی شیواجی مہاراج ٹرمنل سے بیک وقت دو وندے بھارت ٹرینوں کو ہری جھنڈی دکھائی۔ پہلی ٹرین شولاپور اور دوسری سائی نگر شرڈی کے لئے روانہ ہوئی۔ آج کا پروگرام پہلے کے پروگراموں سے مختلف تھا، کیونکہ اب تک ایک ایک وندے بھارت ٹرین کا افتتاح کیا جاتا تھا، لیکن پہلی بار ایک ہی اسٹیشن پر تقریباً ایک ساتھ دو وندے بھارت ٹرینوں کو جھنڈی دکھا کر روانہ کیا گیا۔ اس موقع پر ریلوے کے وزیر اشونی ویشنو، مہاراشٹر کے وزیر اعلی ایکناتھ شندے، نائب وزیر اعلی دیویندر فڑنویس اور بڑی تعداد میں سیاست دان اور ریلوے افسران موجود تھے۔

وزیر اعظم نے ممبئی سے شولاپور جانے والی پہلی ٹرین کو ہری جھنڈی دکھائی۔ کچھ دیر بعد سائی نگری شرڈی جانے والی دوسری ٹرین کو روانہ کیا ۔ اس موقع پر لوگوں کی بڑی تعداد اسٹیشن پر موجود تھی۔ اس طرح پورے ملک میں 10 وندے بھارت ٹرینوں کا آپریشن شروع ہو گیا ہے ۔

ملک کی اقتصادی راجدھانی ممبئی سے ان دونوں وندے بھارت ٹرینوں کو ملا کر وندے بھارت ٹرینوں کی تعداد چار ہو گئی ہے۔ سائی نگر شرڈی اور شولاپور دونوں مقامات مذہبی نقطہ نظر سے اہمیت کے حامل ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ یہاں روزانہ بہت سارے مسافر ٹرین سے سفر کرتے ہیں۔ ان مسافروں کو ذہن میں رکھتے ہوئے دونوں ٹرینیں چلائی گئی ہیں۔

خیال رہے کہ ملک کی پہلی وندے بھارت ٹرین نئی دہلی سے بھگوان شیو کے شہر کاشی تک چلا گئی تھی۔ یہ ٹرین فروری 2019 میں چلائی گئی تھی۔ وہیں دوسری ٹرین کو بھی مذہبی شہر سے جوڑا گیا تھا اور یہ ٹرین نئی دہلی سے شری ویشنو دیوی کٹرا کے درمیان چلی تھی ۔ وہیں تیسری ٹرین گاندھی نگر سے ممبئی کے درمیان شروع کی گئی تھی، چوتھی ٹرین نئی دہلی اور امب اندورا اسٹیشن ہماچل کے درمیان شروع کی گئی تھی ۔

پانچویں وندے بھارت چنئی سے میسور تک چلائی گئی ۔ چھٹی وندے بھارت ٹرین ناگپور سے بلاسپور کے درمیان چلی۔ وہیں ساتویں وندے بھارت ٹرین ہاوڑہ سے نیو جلپائی گوڑی اور آٹھویں وندے بھارت ٹرین سکندرآباد سے وشاکھاپٹنم کے درمیان شروع کی گئی ہے۔ آج دو اور وندے بھارت کو شامل کرکے یہ تعداد 10 ہو جائے گی۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!