Published From Aurangabad & Buldhana

ریلوے اسٹیشن اندرونی راستے کی تعمیر نہ ہونے سے شہریان ہوئے بدحال ،ریلوئے سمیتی نے بھوک ہڑتال کا دیا اشارہ

(راست)

جالنہ (محمد اظہر فاضل)
ریلوے پھاٹک نمبر 78 روزے کے بارے میں بیان کہ بلدیہ کو زیر زمین پل سے پانی کی نکاسی کی سہولت نہیں دینی چاہیے تھی تاکہ سب وے کو تیز کیا جا سکے۔ جناب ، مذکورہ بالا موضوع کے مطابق ، درخواست درخواست پر جمع کی گئی ہے کہ جالنہ ریلوے گیٹ نمبر۔ 78 جو کہ آنند نگر ، ودیوت کالونی ، نوتن وساہت ، ایس بی کالونی ، سہاکر نگر ، جمنا نگر ، پردیشی واڑی اور جالنہ شہر کی حدود میں دیگر کالونیوں کے شہری استعمال کرتے ہیں۔ 78 نمبر گیٹ پر ٹرینوں کی بڑھتی ہوئی ٹریفک کی وجہ سے شہریوں کو گھنٹوں پھاٹکوں پر کھڑا رہنا پڑتا ہے۔ جبکہ 35 سے 40 ہزار لوگ اس راستے آمدورفت کے لیے استعمال کرتے ہے۔ پچھلے 12 سے 15 سالوں سے ، ریلوے سنگھرش کمیٹی اور مقامی لوگوں کے نمائندے بار بار پھاٹک کی بندش کے لیے ریلوے حکام کو نمائندگی کر چکے ہیں۔

ریلوے جدوجہد کمیٹی کی سفارشات پر عمل کرتے ہوئے ، سوین صاحب ، جنرل منیجر ، ریلوے ، راؤ صاحب پاٹل دانوے ، ایم پی ، سےہبار بار نمائندگی کی گئی۔ جس پر پنگ بک ایٹم نمبر۔ 308 ، 2016-17 ریلوے بورڈ کی منظوری سے ، ناندیڑ ریلوے ڈیپارٹمنٹ کو سب وے کے لیے 3 کروڑ روپے کا فنڈ ملا ہے۔ J / W / RUB / LC اور 78/16 مورخہ 25/08/2016۔ میونسپل کارپوریشن کو ایک خط دے کر اور چیف آفیسر اور ریلوے انجینئر اور ریلوے سنگھرش کمیٹی کے عہدیداروں کے ساتھ معائنہ کرکے ، سب وے کے لیے میونسپل ریلوے اسٹیشن اور جمنا نگر کے درمیان رابطہ۔ بلدیہ سے اسے سڑک اور پانی کی نکاسی جوڑنے کی ضمانت مانگی گئی۔ اس کے بعد بلدیہ نے J.No.2018 / Napja / Sabanvi / 2464 ، میونسپل کونسل جالنہ نے ، نیا حکم جاری کیا۔۔

سمیتی نے مورخہ 10/04/2018 کو جالنہ کلکٹر اور ریاستی حکمرانوں کو میمورنڈم دیا تھا ، تب جالنہ کو فی الحال سب وے روڈ کے کام کی ضمانت دی گئی تھی۔ پھر بھی آج تک بلدیہ نے اس متعلق سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کیا کیا ۔ اس علاقے کے 25،000 سے 30،000 لوگوں کو ہر روز دھوپ اور بارش میں گھنٹوں اس گیٹ پر کھڑا رہنا پڑتا ہے۔ اگر ہسپتال ،اسکول اور ایمرجنسی حالات ہوتے ہے تو ریلوے کا پھاٹک بند رہتا ہے ۔سنگھرش کمیٹی نے بار بار۔ یہ درخواست مرکزی وزیر راؤ صاحب دانوے اور سرپرست وزیر ببن راؤ جی لونیکر کو لکھے گئے خط میں کی گئی تھی ۔ حالانکہ جالنہ کے مقامی روزناموں اور الیکٹرانک میڈیا نے اس مسئلے پر بار باراپنی آواز بلند کی ہے ، لیکن جالنہ میونسپلٹی نے کوئی نوٹس نہیں لیا۔ جالنہ ریلوے سنگھرش کمیٹی جالنہ نے حتمی وارننگ دیتے ہوئے انتباہ دیا ہیکہ 15 اگست 2021 کو ریلوے سنگھرش کمیٹی کے عہدیدار اور مقامی شہریان ٹیپو سلطان چوک ، ریلوے اسٹیشن پر ایک روزہ بھوک ہڑتال اور احتجاج کریں گے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!