Published From Aurangabad & Buldhana

حضرت مولا نا کلیم الدین صدیقی کو غیر مشروط طور پر رہا کیا جا ئے (امیر شریعت)

عا لم اسلام کی عظیم المر تبت شخصیت و داعی اسلام حضرت مولا نا کلیم الدین صدیقی کویو پی اے ٹی ایس(ATS) نے بے بنیاد الزامات لگا کر غیر قا نو نی طور پر گرفتا ر کیا ہے۔ یہ نہ صرف با عث تشویش ہے بلکہ قا بل مذمت ہے۔ مو لا نا کی اس طرح گرفتا ری پر نہ صرف مسلما نان ہند بے چین و مضطرب ہین بلکہ انصاف پسند غیر مسلم حضرات بھی محو حیرت ہین۔ چنا چہ اس سلسلہ میں اما رت شر عیہ مر ھٹوا ڑہ اورنگ وآباد کے زیر اہتمام اورنگ آباد کی مسلم تنظیمو ں کے نما ئندوں پر مشتمل ایک وفد نے امیر شر یعت حضرت مو لا نا مفتی محمد معز الد ین قا سمی کی قیا دت میں ڈو یژ نل کمشنر سے ملا قا ت کر کے اُن کے تو سط سے مر کزی وزیرداخلہ کے نام ایک مطا لبا تی محضر (میمو رنڈم) دیا ہے۔

اس مطا لباتی محضر میں کہا گیا کہ مو لا نا کلیم الدین صدیقی ایک ما یہ ناز شخصیت اور جید عا لم دین و داعی اسلام اور امن و سلا متی کے علمبر دار ہیں۔ ان پر لگا ئے گئے تمام الزمات بے بنیاد ہیں۔ اور انکی گرفتا ری غیر قا نو نی ہے۔ اس لیئے اورنگ آبا د کی تمام مسلم تنظیموں کی جا نب سے پر زورمطالبہ کیاجاتاہیکہ انھیں غیر مشروط طور پر فوری رہا کیا جا ئے۔

اس وفد میں امیر شر یعت مفتی محمد معز الد ین قاسمی کے علا وہ نا ئب امیر شریعت مو لا نا عبد الرشید مد نی، مجلس شو ریٰ کے مو لانا منصب خا ن قا سمی، مجلس وفا ق المدارس کے مو لا نا نظا م الدین ملی، جمیعت شا ولی اللہ کے سید اعجاز، تحریک صدا ئے حق کے حا فظ عبد العلیم، جما عت اسلا می کے واجد علی قادری، آ ئی آر سی کے ایڈوکیٹ فیض، لا ئرس فورم مہا راشٹر کے ایڈوکیٹ صغیر احمد، اہل سنت کے حا فظ شریف نظا می، ایم پی جی کے عا دل مدنی، مجلں تعا ون ائمہ کے مفتی ندیم، وحدت اسلا می کے منتجب الدین، صفا بیت المال کے مو لانا انیس الر حمٰن ندوی، اہل حدیث کے محمد تسلیم کے نما ئندہ، تحفظ ختم نبوت کے حا فط سہیل کے علا وہ دیگر تنطیموں کے نما ئند گان شریک رہے۔ اس طرح کا یہ پریس نوٹ مولا نا منصب خان قا سمی نے جا ری کیا ہے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!