Published From Aurangabad & Buldhana

امریکہ کی 244 سالہ تاریخ میں پہلی بار پاکستانی نژاد مسلمان زاہد قریشی امریکی وفاقی جج کی حیثیت سے منتخب

نیو جرسی : سینیٹ نے جمعرات کو 81 اور 16 کے تناسب سے رائے دہندگی میں زاہد قریشی کو نیو جرسی کے ضلعی جج کے طورپر منتخب کرتے ہوئے اپنی مہرلگادی ہے، جس کے بعد وہ امریکہ کی 244 سالہ تاریخ میں پہلے مسلمان امریکی وفاقی جج بن گئے ہیں۔ووٹنگ سے پہلے سینیٹ کے فرش پر سینیٹ کی اکثریت کے رہنما چک شمر ڈی این وائی نے کہا کہ قریشی "ہماری تاریخ میں دفعہ III کے جج کی حیثیت سے خدمات انجام دینے والے پہلے مسلمان امریکی ہوں گے‘‘۔

قریشی جو پاکستانی تارکین وطن کے بیٹے ہیں۔ نیو یارک شہر میں پیدا ہوئے اور اس کی پرورش نیو جرسی میں ہوئی، جہاں انھوں نے روٹجرز لا اسکول (Rutgers Law School) سے قانون کی ڈگری حاصل کی تھی۔ انہوں نے 2001 میں ایک لا فرم میں شمولیت اختیار کی تھی اور 11 ستمبر 2001 کے دہشت گردانہ حملوں کے بعد وہ فوج میں بھرتی ہوئے تھے۔

جوڈیشل کمیٹی کے چیئرمین سین ڈریک ڈربن (Sen. Dick Durbin) ڈی۔ Ill نے ووٹ سے پہلے کہا اس دن کے ان واقعات نے جج قریشی کو عوامی خدمت کے پیشے پر غور کرنے کی ترغیب دی۔ انہوں نے امریکی فوج کے جج ایڈووکیٹ جنرل کے کور میں درخواست دی، جہاں انہیں ایک افسر کی حیثیت سے کمشنر بنایا گیا اور وہ کپتان کے عہدے پر فائز ہوئے‘‘۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!