Published From Aurangabad & Buldhana

۲۰۱۳ء میں بھرتی کیے گئے ۲۸۵؍ ٹی ای ٹی ناکام اساتذہ کی نوکری پرلٹکی تلوار

اورنگ آباد:۲۱؍اگست( اسٹاف رپورٹر)۲۰۱۳ء کے بعدضلع میں جن اساتذہ کی بھرتی کی گئی تھی اس میں سے ۲۷۵؍اساتذہ کی نوکریوں پر تلوارلٹکی ہوئی ہے۔اساتذہ اہلیتی ٹیسٹ (ٹی ای ٹی)میں ناکام اورتعلیمی اداروں کی جانب سے قانون کوبالائے طاق رکھ کران اساتذہ کی بھرتی کی گئی تھی۔یہ تمام بھرتی کانگریس این سی پی حکومت کے آخری دنوں میں پوری ریاست میں کی گئی تھی۔اس بھرتی کے دوران اساتذہ ٹی ای ٹی کے اہل ہیں یا بھرتی کے قانون پرعمل درآمدنہیں کیاگیاتھا۔یہی وجہ ہے کہ ریاست بھرمیں یہ اعدادوشمار ہزاروں تک پہنچنے کاامکان ہے۔مفت ولازمی تعلیم قانون کے تحت سابقہ ریاستی حکومت کی جانب سے ۱۳؍فروری ۲۰۱۳ء کو ایک نوٹیفکیشن جاری کیاگیاتھاجس میں بارہویں کامیاب اوردوسالہ ڈی ایڈ کورس مکمل کرنا ضروری تھا۔ جس کے بعدمرکزی وریاستی حکومتوں نے اس میں تبدیلی کرکے بھرتی سے قبل ٹی ای ٹی کامیاب کرنالازمی قراردیاتھا۔اس کے بعد ٹی ای ٹی امتحانات منعقدکیے گئے۔ لیکن اس پرعمل نہ کرتے ہوئے امدادی اور جزامدادی تعلیمی ادارہ منتظمین نے تعلیمی شعبہ کے افسران وعہدیداران سے ملی بھگت کرکے نااہل اساتذہ کی بھرتی کی تھی۔ ریاستی حکومت کے وزیرتعلیم ونودتاؤڑے نے پہلے ہی اس میں ایک بڑا گھوٹالہ اورکروڑوں کے لین دین کاالزام عائدکیاتھا۔ فی استاذ دس تاپندرہ لاکھ ڈونیشن لیے گئے تھے۔

ان کے معیارتعلیم و قابلیت کو دیکھانہیں کیاگیاتھا۔یہی وجہ ہے کہ دوبارہ اس معاملہ کو حکومت کی جانب سے اٹھایاگیاہے۔حکومتی قانون کے باوجود اس پرعمل کیوں نہیں کیاگیا؟اس ضمن میں ریاست کے ڈی ایڈ بیروزگاروں نے اعتراض درج کروایاتھا۔اس معاملہ میں عدالت میں پٹیشن دائرکی گئی تھی۔ پانچ سالوں بعدریاستی حکومت حواب سے بیدارہوئی اورعدالت کی پھٹکاراورقانون کے پیش نظر اب ان نااہل اساتذہ کی جانچ کرکے انہیں نوکری سے برخاست کرنے کا فرمان جاری کرنے کیلئے ہلچل شروع ہوچکی ہے۔ریاست بھرکے تمام ضلع پریشد تعلیمی انتظامیہ کومطلع کیاگیاہے کہ ۲۰۱۳ء میں جن اساتدہ کی بھرتی ہوئی ہے ان کی فہرست تیارکی جائے اورٹی ای ٹی کامیاب اور ناکام اور قانو ن کی پامالی کرکے بھرتی کیے گئے اساتذہ کی علیحدہ فہرست تیارکریں۔

اس معاملہ میں جن افسران نے اساتذہ کوتقرری لیٹردیے تھے ان کی بھی جانچ کی جائیگی۔ضلع میں ۲۰۱۳ء میں ۲۸۳؍ اساتذہ کی بھرتی کی گئی تھی۔جس میں ۱۳؍اساتذہ غیرامدادی طرزپر جبکہ ۲۷۵؍ ٹی ای ٹی ناکام اور ۱؍استاذ تقرری لیٹرملنے سے قبل ٹی ای ٹی کامیاب تھا۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!