Published From Aurangabad & Buldhana

‘ہر مرتبہ کٹپا بدلتی ہے یہ شیو گامی’

عام آدمی پارٹی کو توڑنے کے الزام پر کمار وشواس کا جواب

نئی دہلی : راجیہ سبھا ٹکٹ کی تقسیم کو لے کر عام آدمی پارٹی میں جاری گھمسان تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے ۔ ایک جانب جہاں دہلی حکومت میں وزیر اور عام آدمی پارٹی کے بانی رکن نے کمار وشواس پر پارٹی توڑنے کا الزام لگایا ہے تو وہیں کمار وشواس نے شمالی کوریا کے تاناشاہ کم جونگ ان اور فلم باہوبلی کے کرداروں ماہشمتی ، شیوگامی اور کٹپا کا ذکر کرتےہوئے گوپال رائے اور اروند کیجریوال پر نشانہ سادھا ۔
گوپال رائے کے الزامات کا جواب دیتے ہوئے کمار وشواس نے کہا کہ پانچ ریاستوں کے انچارج ، دہلی کے ریاستی صدر ، پی اے سی رکن ، قومی ترجمان اور وزیر جیسے نو عہد وں پر رہنے والے گوپال رائے پارٹی کارکنان کو میر جعفر کہتے ہیں ، آج سات مہینے کے بعد ان کی کنبھ کرنی نیند ٹوٹی ہے۔
کمار وشواس نے یہاں باہوبلی فلم کے کرداروں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی نے رائے کی رائے سے کنار ہ کشی اختیار کرلی ، اس ماہشمتی کی شیوگامی دیوی کوئی اور ہے جو باہو بلی کو مارنے کیلئے ہر مرتبہ کٹپا بدلتی رہتی ہے ، میری ان سے درخواست ہے کہ کانگریس اور بی جے پی سے آئے گپتاوں سے ملے "یوگدان ” کا کچھ دن مزہ لیں ، میری لاش کے ساتھ چھیڑ چھاڑ نہ کریں۔
ساتھ ہی ساتھ انہوں نے شمالی کوریا کے تانا شاہ کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ کم جونگ نے دنیا کو بڑا پریشان کررکھا ہے ، لگے ہاتھ امریکہ کے سربراہ بن جائیں ، تھوڑا عالمی امن بھی قائم ہوجائے گا۔
تاہم کمار وشواس نے اپنے رد عمل میں یہاں کسی کا نام تو نہیں لیا ، لیکن ان کی باتوں سے صاف ہے کہ وہ گوپال رائے اور اروند کیجریوال پر نشانہ سادھ رہے تھے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!