Published From Aurangabad & Buldhana

کیا ممبئی میں لگ سکتا ہے لاک ڈاؤن ؟ مہاراشٹر کے وزیر صحت راجیش ٹوپے کورونا متاثر

ممبئی : مہاراشٹر کے وزیر صحت راجیش ٹوپے نے ٹویٹ کے ذریعہ بتایا ہےکہ وہ کورونا سے متاثر ہو گئے ہیں ، ان کی طبیعت بالکل ٹھیک ہے اور وہ جلد ہی کورونا سے ٹھیک ہو جائیں گے اور کام پر لوٹ آئیں گے۔

ادھر مہاراشٹر ریاست میں کورونا کے معاملوں میں اضافہ دیکھا جا رہا ہے اور کل شام پانچ ہزار سے زیادہ کورونا کے نئے معاملہ سامنے آئے۔ کل شام تک مہاراشٹر میں 5427 نئے معاملہ رپورٹ ہوئے جبکہ ممبئی سے اکیلے 736 کیس رپورٹ ہوئے۔حکومت نے وبا پر قابو پانے کےلئے سختی کر دی ہے اور اس نے 300 مارشل لینے کا فیصلہ کیا ہے جو لوکل ٹرین میں مسافرین پر نظر رکھیں گےکہ انہوں نے ماسک پہنا ہوا ہےیا نہیں ۔اس کے علاوہ مزید مارشل ممبئی کی نگرانی کے لئے تقرر کئے جائیں گے۔ادھر ممبئی کے لیے جاری گائیڈ لائنس کے مطابق ایک بلڈنگ میں 5 سے زائد کورونا کے معاملے پائے جانے پر بلڈنگ سیل کر دیا جائے گی۔ جن لوگوں کو ہوم کوارنٹائن کیا جائے گا ان کی کلائی پر اسٹامپ بھی لگائی جائے گی۔ ذرائع کے مطابق اگر صورتحال قابو میں نہیں آئی اور نئے معاملوں میں اضافہ کا رجحان جاری رہا تو ممبئی میں لاک ڈاؤن لگ سکتا ہے۔

ہندوستان میں کورونا انفیکشن کے معاملے تیزی کے ساتھ ضرور کم ہو رہے ہیں، لیکن کچھ ریاستوں میں ایک بار پھر کورونا کیسز میں اضافہ درج کیا جا رہا ہے۔ ایسی ریاستوں میں مہاراشٹر سب سے اہم ہے جہاں حالات خراب ہونے سے پہلے ہی ادھو ٹھاکرے حکومت نے احتیاطی اقدام کرنے شروع کر دیے ہیں۔ انفیکشن کا پھیلاؤ روکنے کے لیے ریاست کے تین اضلاع میں لاک ڈاؤن کا اعلان کر دیا گیا ہے اور ممبئی کے لیے نئی گائیڈ لائنس بھی جاری کر دی گئی ہیں۔ جن اضلاع میں لاک ڈاؤن کا اعلان کیا گیا ہے ان کے نام امراوتی، اکولا اور یاوتمال ہیں۔ ان تینوں اضلاع میں حالات کے مطابق لاک ڈاؤن کا اعلان کیا گیا ہے۔ یاوتمال میں 10 دنوں کے لیے لاک ڈاؤن لگایا گیا ہے۔ امراوتی میں بھی اتوار کو لاک ڈاؤن رکھنے کی بات کہی گئی ہے۔ آنے والے وقت میں نائٹ کرفیو پر عمل کرنے کی ہدایت بھی دی گئی ہے۔

قابل ذکر ہے کہ گزشتہ دنوں بی ایم سی نے اعتراف کیا تھا کہ ممبئی میں کورونا کے معاملوں میں پھر سے اضافہ ہونے لگا ہے۔ بی ایم سی نے متنبہ بھی کیا تھا کہ اگر کورونا کے معاملوں میں اضافہ نہیں رکا تو ممبئی کے لیے سخت پابندیاں نافذ کرنے پر مجبورہونا پڑے گا۔ اب بی ایم سی نے کورونا سے نمٹنے کے لیے کچھ نئی کورونا گائیڈ لائنس جاری کی ہیں۔ نئی گائیڈ لائنس کے مطابق ممبئی میں ماسک لگانا لازمی کر دیا گیا ہے اور ایسا نہ کرنے والوں سے 200 روپے کا جرمانہ وصول کیا جائے گا۔ نئی گائیڈ لائنس کے تحت ہوم کوارنٹائن نہ کرنے والوں پر سخت کارروائی کرنے کا فیصلہ لیا گیا ہے۔ علاوہ ازیں شادی وغیرہ کی تقاریب میں مزید سختی کا اہتمام کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔

سچ تو یہ ہے کہ ممبئی ہی نہیں، پورے مہاراشٹر میں کورونا کے معاملے میں اضافہ دیکھنے کو مل رہا ہے۔ آٹھ اضلاع ایسے ہیں جہاں گزشتہ ہفتہ میں اوسطاً 8 فیصد سے زیادہ کورونا معاملے سامنے آئے ہیں۔ یہ اضلاع ہیں پونے، ناسک، ناگپور، وردھا، یاوتمال، امراوتی، اکولا اور بلڈھانا۔ کچھ علاقوں میں کورونا انفیکشن بڑھنے کی وجہ پنچایت انتخابات بتائی جا رہی ہے۔ دراصل مہاراشٹر میں تقریباً 1400 گرام پنچایتوں میں انتخابات ہونے جا رہے ہیں اور یہی وجہ ہے کہ سرگرمیاں کافی بڑھی ہوئی ہیں۔ ایسے علاقوں میں کورونا کے معاملے کچھ زیادہ ہی بڑھتے ہوئے محسوس ہو رہے ہیں۔

قومی آوازبیورو

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!