Published From Aurangabad & Buldhana

کھیتی کی تقسیم کے تنازعہ اور میاں بیوی کی چپقلش کے سبب بیوی دوبیٹیوں کوقتل کرکے کرشنا دیورے نے خودکشی کرلی

بڑودبازارمیں پیش آئے حادثہ سے سنسنی‘ گاؤں میں غم کی لہر

اورنگ آباد: ۳۱؍ اگست ( اسٹاف رپورٹر)پھلمبری تعلقہ کے ستال پمپری دیہات میں ایک دردناک حادثہ میں ایک شخص نے اپنی دوبیٹیوں اور بیوی کوقتل کرکے پھانسی لے کر خودکشی کرلی۔ایک ہی خاندان کے چارافرادکی حادثاتی موت کے سبب علاقہ میں غم وافسوس کی لہر پائی جارہی ہے۔حادثہ کی اطلاع ملتے ہی پولس جائے وقوع پرپہنچی اور حالات کاجائزہ لیا۔تفصیلات کے مطابق کرشنا تائیراؤ دیورے (۳۰) نے اپنی معصوم بیٹی سروداکرشنا دیورے (۶) ہندوی کرشنا دیورے (۴) اور بیوی شیوکنیا دیورے(۲۷) کاقتل کردیا۔ اوراسکے بعد خودکشی کرکے اپنی زندگی کاخاتمہ کرلیا۔

اس ضمن میں پولس باریک بینی سے تحقیقات میں مصروف ہے ۔اپنے افرادخاندان کاقتل کرنے والے کرشنا تاتیاراؤ دیورے کھیتی باڑی اورویلڈنگ کاکام کرتاتھا۔ گزشتہ کچھ دنوں سے اپنے افرادخاندان سے کھیتی کی تقسیم پر تنازعہ جاری تھا۔ دوماہ قبل ہی پولس اسٹیشن میں یہ معاملہ پہنچاتھا۔ مفاہمت کے ذریعہ پولس نے معاملہ حل کیاتھا۔اسی معاملہ کولے کر میاں بیوی کے درمیان ہمارا زبانی جنگ ہوتی تھی۔کل رات بھی دونوں کے درمیان زورداربحث مباحثہ ہوا۔ جس کے بعد کرشنانے اپنی بیوی شیوکنیاکی پٹائی کی تھی۔ جیسے ہی اس کی خبر اسکے رشتہ داروں کو ملی توانہوں نے پہنچ کرمعاملہ حل کیا۔

رات دیرگئے دونوں بیٹیاں اور بیوی سوگئے اورکرشنا تمام رات جاگتارہا۔ رات دوبجے کے بعد کرشنا بسترسے اٹھااور کدال سے اپنی بیوی کے سرپروارکردیاجس کے سبب اس کی موقع پرہی موت واقع ہوگئی۔قریب ہی کرشنا کی بیٹیاں سرودااورہندوی محوخواب تھیں۔ اس نے بیوی کے قتل کے بعد سرودااورہندوی کا گلا گھونٹ کرقتل کردیا۔بیوی اور دونوں بیٹیوں کے قتل کے بعد کرشنا نے اسی کمرے میں چھت کے اینگل سے پھانسی لگاکر خودکشی کرلی۔حالانکہ کام کاج کیلئے کرشنا صبح سویرے نکل جاتاتھا۔لیکن کافی دیرہونے کے باوجود گھرسے کسی کے بیدار نہ ہونے پر اسکے افرادخاندان اس کے گھر پہنچے ۔انہو ں نے کھڑکی سے جھانک کردیکھا تو کرشنا پھانسی پرجھولتاہوا دکھائی دیاجبکہ ماں اوردونوں بیٹیاں لہولہان فرش پرپڑی تھیں۔ معلومات ساکنان کودی گئی اورپولس کومطلع کیاگیا۔ بڑودبازار پولس اسٹیشن کی پی ایس آئی ارچنا پاٹل اپنی ٹیم کے ساتھ وہاں پہنچی اوربندگھر کا دروازہ توڑا۔تب پولس نے دیکھا کہ کرشنا کی بیوی خون میں لت پت تھی اوردونو ں بچیاں موت کی آغوش میں پہنچ چکی تھیں۔ موت کے اس بھیانک منظرکودیکھ کرپولس عملہ بھی چکراگیا۔ ایمبولنس منگواکر چاروں کی نعشیں سرکاری اسپتال پہنچائی گئیں۔ کرشناکی جیب سے پولس نے ایک پرچی برآمدکی۔ اس پرچی میں اس نے لکھا تھاکہ پہلے پولس کوفون کرو اور اسکے بعددروازہ کھولو۔

اسکے علاوہ پرچی میں آْٹھ مرتبہ رام رام لکھاہواتھا۔ دیہی پولس کے ماتحت بڑودبازارپولس اسٹیشن میں حادثاتی موت کااندرج کرلیاہے مزیدتحقیقات ارچنا پاٹل کررہی ہیں۔ اس دردناک حادثہ کے بعدبڑود بازار اورپھلمبری تعلقہ میں کھلبلی مچی ہوئی ہے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!