Published From Aurangabad & Buldhana

پی ایم مودی کے خلاف راج ٹھاکرے نے پھر کی آواز بلند، کہا ’پردھان سیوک‘ لفظ نہرو کا ایجاد کردہ

راج ٹھاکرے نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ نئی دہلی واقع تین مورتی بھون میں نہرو میموریل میوزیم میں ایک تختی لگی ہوئی ہے جس پر پنڈت نہرو کے حوالے سے لکھا ہوا ہے کہ ’’اس دیش کی جنتا ہمیں پردھان منتری نہ کہے، پرتھم سیوک کہے۔‘‘ اس کا حوالہ دیتے ہوئے ٹھاکرے نے آگے کہا کہ ’’لیکن انھوں نے (مودی) صرف ’پرتھم سیوک‘ کو بدل کر ’پردھان سیوک‘ کر دیا۔‘‘

یہ بیان ٹھاکرے نے مہاراشٹر واقع ناندیڑ میں کانگریس کی قیادت والی 56 پارٹیوں کے مہاگٹھ بندھن کے لیے ایک جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے دیا۔ انھوں نے کہا کہ ’’آپ نہرو اور اندرا گاندھی کو گالی دیتے رہے، لیکن آپ اب بھی ان کی کاپی کرتے ہیں۔ گزشتہ پانچ سالوں کے دوران آپ نے ہر ایشو پر صرف جھوٹ بولا ہے۔‘‘ راج ٹھاکرے نے مودی کے اس الزام کو بھی خارج کر دیا جس میں وہ بار بار کہتے رہے ہیں کہ کانگریس فیملی سے کسی نے بھی اس وقت جیل میں جا کر بھگت سنگھ سے ملاقات نہیں کی جب وہ تحریک آزادی کے دوران پھانسی کی سزا کا سامنا کر رہے تھے۔

اپنی بات ثابت کرنے کے لیے راج ٹھاکرے نے پروگرام میں پی ایم نریندر مودی کی وہ تقریر سنائی جس میں انھوں نے کہا تھا کہ بھگت سنگھ سے ملنے کے لیے کانگریس فیملی کا کوئی شخص نہیں گیا تھا۔ اور پھر ٹھاکرے نے مودی کو غلط اپنے بیان کو صحیح ثابت کرنے کے لیے ایک پرانے اخبار کا کلپ دکھایا جس سے ظاہر ہو رہا تھا کہ نہرو نے بھگت سنگھ سے جیل میں دو بار ملاقات کی تھی۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!