Published From Aurangabad & Buldhana

پھلمبری: دیہی اسپتال کے ملازمین کی بدسلوکیوں سے مریض بدحال

عوام میں شدید ناراضگی

پھلمبری( شیخ عبدالرحیم) سرکار اسپتال صحت عامہ کی بہتر ی او عام طبقات کے مریضوں کی بہتر خدمات کیلئے قائم کئے جاتے ہیں۔ عام مریضوں کو بھی یہاں سے مفت یا قلیل ترین خرچ پریہاں سے خدمات کی امید ہوتی ہے۔حکومت ان اسپتالوں پرخطیر لاگت خرچ کرتی ہے۔تاہم ان دواخانوں میں شریک مریضون سے جب ان اسپتالوں کاعملہ بد سلوکی اور بد اخلاقی سے پیش آتاہے یا ان مریضوں کا استحصال کرتاہے۔ تو ذہنی کوفت اور تکلیف میں مبتلا ہوکر ان مریضوں کی صحت پرمزید منفی اثرات ہی پڑتے ہیں۔ اسپتال کی نرسوں ڈاکٹروں اور دیگر عملہ کے خراب برتاؤ سے مریض اور انکے رشتہ دار بے حدپریشان ہوجاتے ہیں۔ کچھ ایسی ہی صورتحال پھلمبری کے سرکاری دیہی اسپتال کی بھی ہے۔ یہاں امید و آس سے آئے ڈاکٹر مریضوں کویہاں کے ڈاکٹر راست یا باالراست گھاٹی اسپتال اور نگ آباد کاراستہ دکھا دیتے ہیں مریض وان کے رشتہ داروں کو جھڑکیاں دی جاتی ہیں۔ عیاں رہے کہ پھلمبری کے اس اسپتال میں آس پاس کے تقریباً ۹۲؍ دیہاتوں سے ضرورتمند مریض آتے ہیں ۔ اسی ضرورت کے پیش نظر یہاں یہ دیہی اسپتال قائم کیا گیا ہے۔ کچھ ہی سال پہلے اسپتال کیلئے ایک بہترین عمارت بنوایے گئی اور خاطر خواہ طبی عملہ یہاں مقرر کیا گیا۔ لیکن متذکرہ بالا شکایات کے سبب یہاں کے عوام سخت ناراض ہیں اوریہاں کے خاطی عملے پر سخت کارروائی کا مطالبہ کیا جارہاہے۔ انتظامیہ کو چاہئے کہ فوری یہاں کے نظم انصرام کو صحیح کرے ورنہ عین ممکن ہے کہ عوام کا صبر کاپیمانہ لبریز ہوجائے اور کوئی بڑا احتجاج سر اٹھائے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!