Published From Aurangabad & Buldhana

پاسپورٹ اجرائی : اورنگ آبادملک میں 5ویں مقام پر

اورنگ آباد (اے۔ای)طویل انتظار اور حکومت و انتظامیہ سے کئے گئے مطالبات کے بعد گذشتہ سال مارچ میں چھاؤنی علاقے کے پوسٹ آفس میں پاسپورٹ سینٹر کو شروع کیا گیا تھا ۔جس کو ابتداء ہی سے عوام کی جانب سے ملنے والے بھرپور تعاون کی بناء پر اب تک دو ہزار سے زائد پاسپورٹ درخواستوں کی کاروائی کو مکمل کیا جاچکا ہے جس میں سے پندرہ سو افراد کو پاسپورٹ تقسیم بھی کئے جاچکے ہیں ۔شہر کے پاسپورٹ آفس کے ذریعے گذشتہ نو ماہ کے دوران اتنی بڑی تعداد میں اور تیزی کے ساتھ پاسپورٹ کی اجرائی کی بناء پر شہر کا پاسپورٹ آفس کو ملک میں پانچواں مقام حاصل ہوگیا ہے ۔واضح ہوکہ چند سالوں قبل تک شہر میں پاسپورٹ آفس تھا ،لیکن اس کو کسی وجہ سے انتظامیہ نے بند کردیا تھا ۔جس کے نتیجہ میں شہر و ضلع کے ساتھ اطراف کے اضلاع والوں کو پاسپورٹ کے کاموں کے لئے ممبئی کے چکر کانٹنے پڑتے تھے جس میں وقت اور پیسہ دونوں ہی صرف ہوتا تھالیکن ممبئی کے کی آمدورفت کے دوران ضعیف حضرات و خواتین کو کافی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا تھا ۔لہذا ان تمام ہی باتوں کو مدنظر رکھتے ہوئے مختلف سیاسی ،سماجی تنظیموں کے ساتھ عوامی نمائندوں کی جانب سے حکومت سے بار بار شہر میں پاسپورٹ آفس شروع کرنے کے مطالبات کئے جاتے رہے ۔جس کے نتیجہ میں گذشتہ سال حکومت نے شہر میں پاسپورٹ آفس کو دوبارہ شروع کرنے کی منظوری دی ۔جبکہ ابتداء میں یہاں پر روز آنہ ۵۰ درخواستوں کو قبول کرنے کی منظوری دی گئی تھی ،لیکن عوام کی جانب سے ملنے والے بھرپور تعاون کی بناء پر اب ان درخواستوں کی تعداد ڈھائی سو سے متجاوز کرگئی ہے ۔پاسپورٹ اجرائی معاملہ میں تیزی کے ساتھ اس کی کاروائیوں کو انجام دینے کے معاملہ میں اورنگ آباد کے ساتھ ریاست کے دو اضلاع کو شامل کیا گیا ہے جن کا شمار ٹاپ فائے میں ہیں ۔ان میں کولہاپور کا پاسپورٹ آفس ملک میں سرفہرست قرار دیا گیا ہے ،جہاں سے اب تک ۲۲ ہزا ر کے قریب پاسپورٹ جاری کئے جاچکے ہیں ۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!