Published From Aurangabad & Buldhana

نصیحت:آئی ایم ایف چیف نے کٹھوعہ معاملے کو بتایا ‘گھنونا’کہا مودی حکومت دھیان دے

آئی ایم ایف چیف کرسٹین لیگارڈ نے جمعرات کو ہندستان میں خواتین کے خلاف ہو رہے جنسی استحصال کے واقعات پر اظہار فکر کیا۔انہوں نے امید ظاہر کی کہ وزیر اعظم نریندر مودی اور ان کی حکومت اس معاملے پر زیادہ دھیان دے گی۔بتادیں کہ جموں کے کٹھوعہ میں 8 سال کی بچی سے ریپ اور قتل کو واقعے کو لیکر پولر ملک میں ہنگامہ مچا ہوا ہے۔بین الاقوامی میڈیا نے بھی اس معاملے کو اہمیتدی ہے۔

بین الاقوامی آئی ایم ایف چیف کرسٹین لیگارڈ نے کہا،”ہندستان میں جو ہوا ،وہ گھنونا ہے۔میں امید کرتی ہوں کہ نریمندر مودی کی حکومت اس پر زیادہ دھیان دے گی۔کیونکہ یہ ہندستان کی خاتون کیلئے کا فی ضروری ہے”۔

انہوں نے کہا ،”پچھلی مرتبہ جب میں داووسا میں تھی تو میں نے ان سے کہا کہ انہوں نے اپنی تقریر میں ہندستانی خواتین کے بارے میں زیادہ نہیں کہا۔یہ سوال صرف ان کے بارے میں چرچہ کرنے تک محدود نہیں تھا”۔

حالانکہ ،کرسٹنین لیگارڈ نے اس تبصرے کو نجی سوچ بتایا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس بیان کو بطوبین الاقوامی آئی ایم ایف چی کی نظر سے نہ دیکھا جائے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!