Published From Aurangabad & Buldhana

ممبئی میں ریلی کے دوران اویسی پر پھینکا گیا جوتا، پولیس نے ملزم کی کر لی شناخت

ممبئی۔ جنوبی ممبئی کے ناگپاڑہ علاقے میں ایک ریلی سے خطاب کرنے کے دوران مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ اور رکن پارلیمنٹ اسد الدین اویسی پر ایک شخص نے جوتا پھینک دیا۔ پولیس نے بتایا کہ ایم پی کو جوتا نہیں لگا اور ملزم کی شناخت کر لی گئی ہے اور اسے ابھی گرفتار کیا جانا ہے۔

سینئر پولیس افسر نے بتایا کہ رات تقریبا پونے دس بجے اویسی تین طلاق کے مسئلے کے خلاف بول رہے تھے، تبھی یہ واقعہ ہو گیا۔ اویسی نے کہا، ‘میں اپنے جمہوری حق کے لئے اپنی جان دینے کو تیار ہوں۔ یہ تمام مایوس لوگ ہیں، جو یہ نہیں دیکھ سکتے ہیں کہ تین طلاق پر حکومت کے فیصلہ کو عوام خاص طور پر مسلمانوں نے قبول نہیں کیا ہے۔ ‘

انہوں نے کہا، ‘یہ لوگ (جوتا پھینکنے والے کے سلسلہ میں) ان لوگوں میں سے ہیں جو مہاتما گاندھی، گووند پانسرے اور نریندر ڈابھولكر کے قاتلوں کے نظریات کی پیروی کرتے ہیں۔’ حیدرآباد کے ایم پی نے کہا، ‘یہ ہمیں ان کے خلاف سچ بولنے سے نہیں روک سکتے ہیں۔

زون تین کے پولیس ڈپٹی کمشنر وریندر مشرا نے بتایا کہ پولیس نے سی سی ٹی وی فوٹیج کے ذریعے اویسی پر جوتا پھینکنے والے شخص کی شناخت کر لی ہے اور اسے گرفتار کرنے کا عمل جاری ہے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!