Published From Aurangabad & Buldhana

متعلقہ افراد کے ڈگری نہ لینے کی بناء پر یونیورسٹی میں ہزاروں ڈگریاں دھول کی نذر

اورنگ آباد (اے۔ای)ڈاکٹر بابا صاحب امبیڈکر مرٹھواڑہ یونیورسٹی یا اس سے ملحقہ کالجس سے مختلف کورسیس کی ڈگری حاصل کرنے والے ہزاروں افراد نے گذشتہ کئی سالوں سے اپنے ڈگری سرٹفکٹ حاصل نہیں کئے ہیں ۔جس کی بناء پر فی الحال یونیورسٹی میں ہزاروں ڈگریاں الماریوں میں بند پڑی دھول کھاررہی ہے ،اور ان ڈگریوں میں کچھ ڈگری والوں نے ۲۵ سالوں سے اپنی ڈگریوں کو نہیں لیا ہے ۔لہذا اس صورت حال میں ان دھول کھا رہی ڈگریوں کا کیا کیا جائے اس بات کو لیکر یونیورسٹی انتظامیہ شش وپنج میں مبتلاء ہے۔اس لئے کہ کئی ڈگریوں کو دودہائیوں سے زائد کا عرصہ بیت جانے کے نتیجہ میں ان کی حالت خستہ ہوتی جارہی ہے جس کے خراب ہونے کی صورت میں انتظامیہ کو ان ڈگریوں کو دوبارہ تیار کرنے کی نوبت آسکتی ہے ۔واضح ہوکہ چند سالوں قبل تک روزگار حاصل کرنے یا دیگر کاموں کیلئے ڈگری کی ضرورت نہیں ہوا کرتی تھی ،لیکن اس کے بعد تقریبا تمام ہی کاموں کیلئے ڈگری سرٹفکٹ کے ضروری قرار دئیے جانے کی وجہ سے اس کے یونیورسٹی سے حاصل کرنے کا رجحان میں تیزی کے ساتھ اضافہ ہوا ہے ۔اس لئے کہ ڈگری حاصل کرنے سے قبل آن لائن درخواست دینے کے بعد ایک ہفتہ کے اندر متعلقہ فرد کو ڈگری مل جاتی ہے ،جبکہ حسب روایت پوسٹ کے ذریعے ڈگری بھیجنے کا سلسلہ یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے بند کردیا گیا ہے ۔اسی لئے اب ڈگری کے لئے متعلقہ طالب علم کو یونیورسٹی ہی آنا پڑتا ہے ،جبکہ گذشتہ د و دہائیوں سے دھول کی نذر ہورہی ڈگریوں کے پتوں کا ریکارڈ موجود نہ ہونے کی بناء پران کو متعلقہ افراد تک بذریعے پوسٹ روانہ کرنا مشکل ہوگیا ہے ۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!