Published From Aurangabad & Buldhana

صدر رام ناتھ کووند نے مہا راشٹر میں 6ماہ کیلئے صدر راج نفاذکو منظوری دے دی

نئی دہلی: مہاراشٹر میں تیزی سے بدلتی ہوئی سیاسی پیشرفت کے درمیان، صدر رام ناتھ کووند نے منگل کے روز ریاست میں صدارتی حکومت سے متعلق سفارش پر مہر ثبت کر دی۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ کووند نے مرکزی کابینہ کی سفارش پر مہاراشٹر میں چھ ماہ کے لئے صدر راج کی منظوری دی ہے۔ اس دوران قانون ساز اسمبلی معطل رہے گی۔

قابل ذکر ہے کہ مرکزی کابینہ نےگورنر بھگت سنگھ کوشیاری کی سفارش پر غور کرتے ہوئے صدارتی حکومت کی سفارش کی تھی ، جسے شام کو کووند نے منظور ی دے دی۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کی حکومت سازی سے دستبرداری کے بعد ، گورنر نے دوسری بڑی پارٹی شیوسینا کو ممبران اسمبلی کی تعداد کے مطابق حکومت بنانے کی دعوت دی تھی۔ کوشیاری نے شیوسینا کو حکومت بنانے کا دعویٰ پیش کرنے کے لئے 24 گھنٹے کی مہلت دی تھی۔

شیوسینا کے رہنماؤں نے کل گورنر سے ملاقات کرکے نیشلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) اور کانگریس کی حمایت حاصل کرنے کے لئے کم از کم 48 گھنٹے مہلت مانگی تھی ، لیکن مسٹر کوشیاری نے انکار کردیا ۔ بعدازاں ، گورنر نے این سی پی کو بھی حکومت بنانے کی دعوت دی ، لیکن کوئی حل دیکھنے میں نہیں آیا ، انہوں نے مرکزی حکومت کو ریاست میں صدر راج لگانے کی سفارش کی۔

وزیر اعظم نریندر مودی کے برازیل کے دورے کے پیش نظر ، آج منعقدہ مرکزی کابینہ کے اجلاس میں صدر راج کی سفارش کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ اس کے بعد مسٹر کووند نے اسے منظوری دے دی۔ دریں اثنا ، شیوسینا نے گورنر کے فیصلے کے خلاف عدالت عظمی میں رجوع کیا ہے تاکہ اسے حکومت سازی کے لئے مزید وقت نہ دیا جائے۔

یو این آئی

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!