Published From Aurangabad & Buldhana

سابق کانگریسی وزیر عبدالستار شیوسینا میں شامل

اورنگ آباد: سابق وزیر عبدالستار اپنے حامیوں کے ساتھ شیوسینا میں شامل ہو گئے ہیں۔ انہوں نے پیر کو گنیشچترتھی کے موقع پر شیوسینا کے سربراہ ادھو ٹھاکرے کی موجودگی میں ماتوشری میں شیوسینا میںشامل ہوئے۔ ادھو نے ان کی کلائی پر شیوبدھن باندھ کر پارٹی میں شامل کیا۔

اورنگ آباد کی سلوڈ اسمبلی سیٹ سے کانگریس کے ٹکٹ پر دو بار رکن اسمبلی رہ چکے ستار شیوسینا میں شامل ہونے سے ضلع کی سیاست میں ہلچل مچ سکتی ہے۔ اس لوک سبھا انتخابات میں کانگریس میں رہتے ہوئے عبدالستارنے اورنگ آباد پارلیمانی سیٹ سے ٹکٹ مانگا تھا۔ ٹکٹ نہ ملنے سے ناراض ہو کر انہوں نے کانگریس چھوڑ دی تھی۔ اگرچہ جون 2019 میں عبدالستار نے ادھو ٹھاکرے سے ملاقات کی تھی۔تبھی سے بحث تھی کہ وہ شیوسینا میں شامل ہوں گے۔

اسمبلی انتخابات میں بی جے پی-شیوسینا اتحاد ہوتا ہے تو سلوڈ اسمبلی سیٹ بی جے پی کے کوٹے میں جائے گی۔ ایسے میں شیوسینا کی جانب سے عبدالستار کو کس نشست سے ٹکٹ دیا جائے گا،یہ ابھی واضح نہیں ہے۔ اس سے پہلے بحث تھی کہ آٹھ ستمبر کے بعد بی جے پی اور شیوسینا میں سیٹ تقسیم کو لے کر اہم بحث ہونے والی ہے۔ اس کے بعد عبدالستار اپنی سیاسی زندگی کی نئی سمت منتخب کریں گے لیکن اتوار کی رات کوعبدالستار کو ماتوشری سے ممبئی پہنچنے کا حکم آیا۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!