Published From Aurangabad & Buldhana

سابق لوک سبھا اسپیکر سومناتھ چٹرجی کا 89 سال کی عمر میں انتقال

سینئر سی پی ایم رہنما اور سابق لوک سبھا اسپیکر سومناتھ چٹرجی 89 سال کی عمر میں انتقال کر گئے۔

سینئر سی پی ایم رہنما اور سابق لوک سبھا اسپیکر سومناتھ چٹرجی 89 سال کی عمر میں انتقال کر گئے۔ چٹرجی کو گزشتہ مہینہ برین ہیمریج ہوا تھا جس کے بعد سے ان کی صحت خراب چل رہی تھی۔ چند دنوں سے وہ گردے کے مسئلہ سے جوجھ رہے تھے اور اسی وجہ سے انہیں 10 اگست کو کلکتہ کے اسپتال میں دوبارہ بھرتی کرایا گیا تھا جہاں ڈاکٹروں نے انہیں وینٹیلیٹر پر رکھا تھا۔

اتوار کی صبح ڈائلیسس کے دوران انہیں دل کا ہلکا دورہ بھی پڑا تھا حالانکہ بعد میں وہ اس سے ابھر گئے تھے۔

سابق اسپیکر سومناتھ چٹرجی 10 بار لوک سبھا کے رکن رہ چکے تھے۔ ان کے والد نرمل چندر چٹرجی اپنے زمانہ کے مشہور وکیل تھے۔ وہ اکھل بھارتیہ ہندو مہاسبھا کے بانی ارکان میں شامل تھے۔ حالانکہ سومناتھ چٹرجی نے اپنے والد کے موقف سے الگ ہٹ کر لیفٹ سیاست کی طرف قدم بڑھایا اور 1968 میں سی پی ایم کے ساتھ سیاسی کیریئر کی شروعات کی۔ 1971 میں وہ پہلی بار رکن پارلیمنٹ منتخب کئے گئے۔

حالانکہ، سال 2008 میں سی پی ایم نے اپنےسب سے سینئر رکن پارلیمنٹ کو پارٹی سے نکال دیا۔ دراصل، اس وقت، ہندوستان۔ امریکہ جوہری معاہدہ بل کے خلاف احتجاج میں سی پی ایم نے اس وقت کی منموہن سنگھ کی حکومت سے حمایت واپس لے لی تھی۔ سومناتھ چٹرجی تب لوک سبھا کے اسپیکر تھے اور پارٹی نے انہیں بھی اسپیکر کا عہدہ چھوڑنے کی ہدایت دی تھی، لیکن انہوں نے اسے نہیں مانا جس کے بعد پارٹی نے ان کے خلاف یہ قدم اٹھایا۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!