Published From Aurangabad & Buldhana

دہلی : معشوقہ کو گولی مار کر ڈاکٹر نے کی خودکشی!

دہلی کے روہنی سیکٹر-13 علاقہ میں بدھ کی صبح ایک کار میں دو لاشیں پائی گئیں۔ یہ لاشیں ڈاکٹر اوم پرکاش ککریجا اور سدیپتا مکھرجی کی تھیں۔ پولس نے بتایا کہ ڈاکٹر ککریجا نے پہلے تو خاتون کو گولی ماری اور پھر خود کو بھی گولی مار کر ہلاک کر لیا۔

65 سالہ ڈاکٹر اوم پرکاش ککریجا کا اسپتال روہنی میں ہے۔ 55 سالہ سدیپتا مکھرجی اسپتال کے ڈائریکٹر تھیں۔ آج صبح دونوں روہنی سیکٹر-13 میں رنگ رسائل اپارٹمنٹ کے نزدیک کار میں مردہ ملے۔ دونوں کو گولی لگی ہوئی تھی۔ پولس نے بتایا کہ صورت حال کو دیکھ کر معلوم ہوتا ہے کہ پہلے تو ڈاکٹر ککریجا نے سدیپتا مکھرجی کو گولی ماری اور پھر خود کو بھی گولی کا نشاہن بنا لیا۔

روہنی کے ڈی سی پی ایس ڈی مشرا کا کہنا ہے کہ ’’ڈاکٹر ککریجا اور سدیپتا مکھرجی کے درمیان گزشتہ کئی سالوں سے عشق و معاشقہ چل رہا تھا۔ سدیپتا اب شادی کرنے کا دباؤ ڈالنے لگی تھیں۔ غالباً ڈاکٹر ککریجا یہ دباؤ برداشت نہیں کر پائے اور پہلے تو سدیپتا کے سینے پر گولی ماری اور پھر خود کو بھی ہلاک کر لیا۔‘‘

پولس کا کہنا ہے کہ ڈاکٹر ککریجا کا بیٹا بھی ڈاکٹر ہے اور وہ دہرہ دون میں ہے۔ دہرہ دون میں ان کا ایک اسپتال ہے۔ پولس اس قتل واقعہ کی گہرائی سے جانچ کر رہی ہے اور یہ پتہ لگانے کی کوشش کر رہی ہے کہ ڈاکٹر ککریجا نے واقعی خودکشی کی ہے یا پھر اسے خودکشی میں تبدیل کرنے کی کوشش کی گئی ہے۔ فی الحال ڈاکٹر ککریجا اور سدیپتا مکھرجی کی لاش پوسٹ مارٹم کے لیے روہنی کے بابا صاحب امبیڈکر اسپتال بھیج دیا گیا ہے۔ دہلی پولس پورے معاملے کی جانچ میں مصروف ہے۔

قومی آوازبیورو

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!