Published From Aurangabad & Buldhana

دو سو اور 2000 روپے کے نوٹ کو لے کر بڑا فیصلہ ، وزارت خزانہ نے جاری کیا یہ حکم

آپ کے 200 اور 2000 روپے کے گندے اور کٹے پھٹے نوٹ بدلنے کی راہ ہموار ہوگئی ہے۔

آپ کے 200 اور 2000 روپے کے گندے اور کٹے پھٹے نوٹ بدلنے کی راہ ہموار ہوگئی ہے۔ وزارت خزانہ نے اس سلسلہ میں ریزرو بینک آف انڈیا کے مسودے کو ہری جھنڈی دیدی ہے۔ اس کیلئے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔ آپ کو بتادیں کہ ریزرو بینک نے وزارت کو کٹے پھٹے اور گندے نوٹ بدلنے کے آر بی آئی ( نوٹ ریفنڈ ) رولس 2009 میں تبدیلی کی تجویز بھیجی تھی ۔ اب نئے قوانین جاری کردئے گئے ہیں ۔ اس سے پہلے قوانین کے مطابق صرف 1،2،5،10،20،50،100،500،1000روپے کے نوٹ بدلنے کا ہی بندوبست تھا ۔

پہلے قانون میں کوئی ایسا بندوبست نہیں تھا ، جس کی بنیاد پر بینک 2000 اور 200 روپے کے گندے ، پرانے یا کٹے پھٹے نوٹ بدل سکیں ۔ نوٹ بدلنے کا قانون آر بی آئی ایکٹ کی دفعہ 28 کے تحت آتا ہے۔ اس میں نوٹ بندی کے پہلے جیسے ہی کٹے پھٹے یا گندے نوٹ بدلنے کی اجازت تھی ، نوٹ بندی کے بعد ریزرو بینک نے اب تک اس میں کوئی بھی تبدیلی نہیں کی تھی ۔ اب نئے مسودے میں ترمیم کرکے 200 اور 2000 روپے کے نوٹ بدلنے کا بندوبست کیا گیا ہے۔

دو ہزار روپے کے نوٹ نومبر 2016 میں نوٹ بندی نافذ ہونے کے بعد جاری کئے گئے تھے جبکہ 200 روپے کا نوٹ ستمبر 2017 کے بعد جاری ہوا ہے۔ ملک بھر میں بڑی تعداد میں لوگ اس بات کو لے کر کافی پریشان تھے کہ نوٹ نہیں بدلے جارہے ہیں۔ بینک بھی قانون نہ ہونے کی وجہ سے لوگوں کے نوٹ نہیں بدل پارہے تھے ۔ قانون میں تبدیلی ہونے کے بعد اب لوگوں کو راحت ملے گی۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!