Published From Aurangabad & Buldhana

دلتوں، اقلیتوں پر مظالم کے خلاف9 جنوری کو دہلی میں ’ہنکار ریلی‘

نئی دہلی: 9 جنوری کو سنسد مارگ پر ’ہنکار ریلی‘ کیلئے دلت لیڈر اور ممبر اسمبلی جگنیش میوانی پوری طرح تیار ہیں۔ اس ریلی میں کم و بیش 300 تنظیموں کے نمائندوں نے شرکت کرنے کا اعلان کر دیا ہے جس سے BJP اور RSS میں بے چینی کا عالم ہے۔ اس بے چینی کا اندازہ اس بات سے بھی لگایا جاسکتا ہے کہ انھوں نے سوشل میڈیا میں یہ بات پھیلانا شروع کر دی ہے کہ ہنکار ریلی کینسل ہوگئی ہے یا پھر اس ریلی کو کرنے کی اجازت دہلی پولس نے نہیں دی ہے۔ ’راشٹریہ دلت ادھیکار منچ‘ سے منسلک اور جگنیش میوانی کی ’ہنکار ریلی‘ کو کامیاب بنانے کیلئے پرعزم سماجی کارکن بھرت نے اس سلسلے میں ’قومی آواز‘ کو بتایا کہ ’’سنسد مارگ میں 9 جنوری کو ہنکار ریلی ضرور ہوگی اور اس کے منسوخ ہونے کی جو خبریں میڈیا میں پھیل رہی ہیں وہ بی جے پی اور RSS کارکنان کے ذریعہ پھیلائی جا رہی غلط فہمی ہے۔‘‘ انھوں نے مزید بتایا کہ دلتوں اور مظلوموں کے حق کی آواز اٹھانے والی اس’ہنکار ریلی‘ کو یوتھ تنظیموں کا زبردست تعاون حاصل ہو رہا ہے اور اس کی کامیابی یقینی ہے۔ ’ہنکار ریلی‘ سے دلت لیڈر جگنیش میوانی کے علاوہ آسام کے کسان لیڈر اکھل گوگوئی بھی خطاب کرنے والے ہیں۔ ذرائع کے مطابق اس ریلی میں مرکزی حکومت کی غلط پالیسیوں اور دلتوں پر ہو رہے مظالم کے خلاف آواز بلند کی جائے گی۔ ساتھ ہی مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا جائے گا کہ ملک میں گؤ رکشا کے نام پر ہو رہے تشدد اور موب لنچنگ کے نام پر ہو رہے قتل کو سنجیدگی سے لیا جائے اور قصورواروں کے خلاف کارروائی کی جائے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!