Published From Aurangabad & Buldhana

دابھولکر قتل معاملہ: اورنگ آباد کے کالسکر نے ممبئی میں چھپائے تھے 4 ہتھیار: سی بی آئی

ہتھیار پھینکتے وقت نالاسوپارہ کا راؤت بھی تھا ساتھ

اورنگ آباد: مرکزی جانچ ایجنسی (سی بی آئی) نے سنیچر کو نریندر دابھولکر قتل معاملہ میں عدالت کو بتایا کہ حالیہ گرفتاریوں میں اورنگ آباد کے شرد کالسکر نے جولائی میں ممبئی میں چار آتیش اسلحے چھپانے کی غرض سے کھاڑی میں پھینکے تھے۔

سی بی آئی نے دعوی کیا تھا کہ 20 اگست 2013 کو اومکاریشور پل پر دابھولکر کو جن دو لوگوں نے گولی ماری تھی ان میں سے ایک اورنگ آباد کا کالسکر تھا۔ سی بی آئی نے عدالت کو یہ بھی بتایا کہ کالسکر کے ہتھیار پھینکتے وقت انسداد دہشت گردی اسکواڈ کے ذریعہ نالا سو پارہ سے گرفتار کیا گیا دیبھو راؤت بھی ساتھ تھا۔
واضح ہوکہ راؤت اور کالسکر کو ممبئی کے نالاسو پارہ سے ہتھیاروں کے ساتھ ATS نے 10 اگست کو گرفتار کیا تھا۔ مجسٹریٹ ایس ایم اے سید نے سی بی آئی میں کالسکر کی کسٹڈی میں 17 ستمبر تک توسیع کردی ہے۔

سی بی آئی کے وکیل وجئے کمار ڈھاکنے نے عدالت میں بتایا کہ 23 جولائی کو کالسکر اور راؤت نے پونہ سے نالاسوپارہ جاتے وقت ممبئی کے قریب کسی پل کے پاس کھاڑی میں چار آتیش اسلحہ کو توڑ کر پھینکا تھا۔
ڈھاکنے نے کہا کہ سی بی آئی کی جانب سے ابھی اس پل کا پتہ لگایا جا رہا ہے جہاں وہ ہتھیار پھینکے گئے تھے۔ ڈھاکنے نے بتایا کہ چونکہ وہ دونوں رات میں سفر کررہے تھے اس لئے انہیں ٹھیک سے یاد نہیں کہ وہ کلوا کا پل تھا، گھوڑ بندر کا یا کہیں اور کا پل تھا۔

اس موقع پر سی بی آئی افسر نے کہا کہ ہمیں شک ہے کہ پھینکے گئے ان چار ہتھیاروں میں سے کسی ایک کا استعمال دابھولکر کے قتل میں ہوا تھا۔ ساتھ ہی ایسا لگتا ہے کہ گوری لنکیش قتل معاملہ میں امول کالے کی گرفتاری کے بعد ڈر سے راؤت اور کالسکر نے ہتھیاروں کا پھینک دینے کا ارادہ کیا تھا۔ کالے کو کرناٹک کی خصوصی پولس نے مئی میں صحافی گوری لنکیش کے قتل کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔ سی بی آئی نے کالے کو اسی ماہ اپنی کسٹڈی میں لیا تھا۔ سی بی آئی کو شک ہے کہ دابھولکر پر گولی چلاتے وقت اورنگ آباد کے کالسکر اور سچن آندورے کے علاوہ بھی کوئی اور بھی ساتھ تھا۔

آندورے کو 18 اگست کو گرفتار کیا گیا تھا۔ سی بی آئی نے بتایا کہ جب اوم کریشور برج پر دابھولکر صبح کو چہل قدمی کر رہے تھے تو کسی نے ان سے ملاقات کی۔ گولی چلانے والوں میں سے کسی ایک نے اس شخص سے پوچھا کہ جس سے اس نے ملاقات کی کیا وہ دابھولکر ہی ہیں؟ تصدیق ہونے پر کالسکر فوراً دابھولکر کے پاس گیا اور ان پر دو گولیاں چلادیں۔ دابھولکر کے گرنے کے بعد پھر آندورے نے بھی گولیاں چلائی۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!