Published From Aurangabad & Buldhana

جموں و کشمیر میں دہشت گردانہ حملہ ، سی آر پی ایف کے 5 جوان شہید

جموں و کشمیر کے اننت ناگ میں ہوئے ایک دہشت گردانہ حملے میں سی آر پی ایف کے پانچ جوان شہید ہوگئے ہیں جبکہ چار دیگر زخمی ہوگئے ہیں ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ انہوں نے ایک ملی ٹینٹ کو مار گرایا ہے ۔ سی آر پی ایف ذرائع نے بتایا کہ یہ حملہ کے پی جنرل بس اسٹینڈ کے پاس کیا گیا ۔ گاڑی میں بیٹھے ملی ٹینٹوں نے سیکورٹی فورسیز پر اچانک گولی چلانی شروع کردی۔
سی آر پی ایف کے جوانوں کو لا اینڈ آرڈر بنائے رکھنے کیلئے ڈیوٹی پر تعینات کیا گیا تھا ۔ زخمی جوانوں کو اسپتال میں بھرتی کرایا گیا ہے ۔ زخمیوں میں سی آر پی ایف کے دو جوان سمیت ایس ایچ او اننت ناگ ارشد احمد اور ایک خاتون شامل ہیں ۔ خاتون کے پاوں میں گولی لگی ہے ۔ ایس ایچ او ارشد احمد کو علاج کیلئے سری نگر لے جایا گیا ہے ۔

ملی ٹینٹ تنظیم العمر مجاہدین نے اس حملے کی ذمہ داری لی ہے ۔ تنظیم نے پانچ سیکورٹی اہلکاروں کو مارنے کا دعوی کیا ہے ۔ العمر مجاہدین نے اس طرح کے حملے جاری رکھنے کی بھی دھمکی دی ہے ۔ غور طلب ہے کہ جموں و کشمیر کے پلوامہ میں فروری میں ایک دہشت گردانہ حملہ میں سی آر پی ایف کے 40 جوان شہید ہوگئے تھے ۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!