Published From Aurangabad & Buldhana

تین سال بعد بھی آرکی ٹیکچر کالج صرف کاغذ پر

اورنگ آباد:۔ تین سال قبل ریاستی حکومت کے سالانہ بجٹ میں اسکول آف پلانگ اینڈ آرکی ٹیکچر(SPA) کے قیام کے اعلان ہونے بعد بھی آج تک یہ کالج صرف کاغذات پر ہی ہیں۔
اورنگ آباد میں SPAکالج کے قیام کا اعلان مارچ 2015میں ہوا تھا اور اس کے لئے 10کروڑ روپئے بھی مختص کردیے گئے تھے۔ لیکن اس معاملہ میں کوئی پیش رفت نہ ہونے کی وجہ سے وہ فنڈ بھی ضائع ہوچکا ہے۔اگر یہ کالج اورنگ آباد میں آتا ہے تو دہلی، بھوپال اور وجے واڑہ کے بعد ملک میں یہ چوتھا کالج ہوگا۔ اس ادارہ کا اعلان شہر کے لئے باعث اعزاز تھا لیکن اس اعزاز کا شہریان صرف انتظار ہی کررہے ہیں۔
تعلیمی کارکن تکارام صراف نے اس موقع پر کہا کہ ’’جب اورنگ آباد میں اعلان شدہ IIMکے قیام کو واپس لے لیا گیا تھا تو عوام کے غصہ کو خاموش کرنے کے لئے یہ صرف اعلان کیا گیا تھا۔شہر کے لوگوں کو IIMجیسے مشہور ادارہ کے آنے کی امید تھی لیکن اسے نئی ریاستی حکومت نے ناگپور منتقل کردیا تھا۔ یہ مراٹھواڑہ کے ساتھ کھلی نا انصافی کی گئی ہے۔ایک جانب ناگپور کے لئے اعلان شدہ پروجیکٹ شروع ہوچکے ہیں لیکن مراٹھواڑہ کو مستقل نظر انداز کیا جارہا ہے‘‘۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!