Published From Aurangabad & Buldhana

تمل ناڈو میں 12لاکھ اور کرناٹک میں8لاکھ مسلمانوں کے نام ووٹر لسٹ سے غائب!!!

دیگرر یاستوں سے بھی لاکھوں افراد کے نام غائب ہونے کی خبریں، پورے ملک سے تقریباً 20 فیصد مسلمانوں کے نام غائب ہونے کا اندیشہ

چنئی: حالیہ دنوں میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ تمل ناڈو میں ووٹر فہرست میں سے تقریباً 12لاکھ اور کرناٹک میں سے 8لاکھ مسلمانوں کے نام غائب ہیں۔ایک سماجی کارکن نییہ معلومات مسلم مرر ڈاٹ کام کے سید علی مجتبیٰ کو بتائی اور اس نے کہا کہ یہ اعداد و شماراس نیتمل ناڈو کی 25000مساجد سے جمع کی ہیں۔ ان مساجد نے اس سماجی کارکن کو ان لوگوں کی فہرست دی جو اس علاقہ میں رہتے ہیں اور انکے نام ووٹر لسٹ میں نہیں ہیں۔اس طرح یہ تعداد کل 12لاکھ تک نکل کر سامنے آئی ہے۔

اسی طرح جنوب کی ایک اور ریاست کرناٹک میں بھی تقریباً 8لاکھ مسلمانوں کے نام ووٹر فہرست سے غائب ہیں۔جنوبی ہندوستان میں سماجی کارکنان کی جانب سے فوراً اقدامات کرنے کی وجہ سے وہاں اس معاملے میں فوراً بیداری نظر آرہی ہے۔لیکن تمل ناڈو اور کرناٹک سے اس طرح کی خبروں کے بعد ملک کی دیگرریاستوں میں بھی اسی طرح کی کیفیت ہونے کا اندیشہ ہے۔ ایک اندازہ کے مطابق پورے ملک میں کم از کم 20فیصد مسلمانوں کے نام ووٹر لسٹ سے غائب ہونے کا امکان ہے۔ اگر یہ کیفیت صحیح ثابت ہوتی ہے اس معاملہ میں فوراً کاروائی کرنا لازمی نظر آتا ہے۔

ایک معلومات کے مطابق اتر پردیش میں52لاکھ ، آسام میں 40لاکھ مسلمانوں کے نام فہرست سے غائب ہیں، ان اعدادوشمارکی فی الحال تصدیق نہیں ہوپائی ہے۔مسلم سماجی کارکنان کے مطابق ان اعدادو شمار کی فوراً جانچ کر اس پر اقدامات کرنے کی اہم ضرورت ہے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!