Published From Aurangabad & Buldhana

بھارت بند LIVE: اپوزیشن کا بند کامیاب، بوکھلائی مودی سرکار

10.09 AM
پٹرول-ڈیزل کی آسمان چھوتی قیمتوں، ڈالر کے مقابلہ روپیہ کی گرتی قدر اور مودی حکومت کی عوام مخالف پالیسیوں کے خلاف کانگریس کی اپیل پر حزب اختلاف کی پارٹیوں کی جانب سے ’بھارت بند‘ کا اہتمام کیا گیا ہے۔ بند کئی شہروں میں مشتعل ہو گیا ہے کئی جگہ ٹرینوں کو روکا گیا ہے۔کانگریس اور تقریباً تمام حزب اختلاف کے بند کا اثر صبح سے ہی نظر آنے لگا، جگہ جگہ مظاہرہ کیا گیا اور مودی حکومت کے خلاف نعرے بازی کی گئی۔ تلنگانہ میں کانگریس پارٹی کارکنان سراپا احتجاج ہیں۔ حیدرآباد کے مرشد آباد میں بس ڈپو اور ضلع بھونگیر کے یدادری بھونگیری میں تیل قیمتوں کے اضافہ کے خلاف مظاہرہ کیا جا رہا ہے۔ملک بھر میں کانگریس کے ’بھارت بند‘ کی حمایت میں 20 پارٹیاں سڑکوں پر ہیں۔ کیلاش مانسروور یاترا سے لوٹے کانگریس صدر راہل گاندھی بھی احتجاج میں شامل ہوئے۔ انہوں نے سب سے پہلے راج گھاٹ پہنچ کر مہاتما گاندھی کو خراج عقیدت پیش کیا اس کے بعد رام لیلا میدان تک اپوزیشن کے مارچ کی قیادت کی۔ مارچ میں یو پی اے چیئرپرسن سونیا گاندھی اور سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ بھی شامل ہوئے۔

01.32 PM
اپوزیشن کا بند کامیاب، بوکھلائی مودی سرکار
کانگریس کی کال پر ملک بھر میں بھارت بند کا اہتمام کیا گیا ہے۔ بند کا ملک بھر میں بڑے پیمانے پر اثر ہوا ہے، جس کی وجہ سے مودی حکومت کی بوکھلاہٹ صاف نظر آ رہی ہے۔ بی جے پی کے رہنما بند کے خلاف لگاتار بیان بازی کر رہے ہیں، حالانکہ بڑھتی مہنگائی کے بارے میں وہ کچھ نہیں کہہ رہے۔روی شنکر پرساد نے تو باقاعدہ پریس کانفرنس بلا کر بھارت بند کے حوالے سے کانگریس کو کوسا۔ اتنا ہی نہیں انہوں نے بہار کے جہان آباد میں ایک بچی کی موت کو بھی بھارت بند سے جوڑ دیا۔ ان کے جھوٹ کا پردہ فاش کچھ ہی دیر میں اس وقت ہو گیا جب بہار کے ایس ڈی او نے میڈیا سے کہا کہ بچی کی موت کا بند سے کوئی لینا دینا نہیں ہے۔

01.02 PM

لفٹ پارٹیوں کا زبردست مظاہرہ
حزب اختلاف کے بھارت بند کا بڑے پیمانے پر اثر ہوا ہے دہلی میں لفٹ پارٹیوں نے بڑھتی مہنگائی کے خلاف زبردست مظاہرہ کیا۔ دریں اثنا موصول اطلاع کے مطابق دہلی میں کچھ لفٹ رہنماؤں کو پولس نے حراست میں لیا ہے۔ حراست میں لئے گئے رہنماؤں کو تھانہ سنسند مارگ میں لے جایا گیا ہے۔ادھر فریدآباد میں بھی پٹرول اور ڈیزل کی بڑھتی قیمتوں کے خلاف مظاہرہ کیا گیا۔

12.14 PM

حکومت یہ بھی کہہ سکتی ہے کہ مہنگائی سے ترقی آئے گی: اکھلیش یادو
دہلی کانگریس نے اپنے منفرد انداز میں بڑھتی قیمتوں کے خلاف احتجاج کیا۔ دہلی پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر اجے ماکن نے ایک پٹرول پمپ پر بیل گاڑی پر بیٹھ کر عوام سے خطاب کیا۔

بھارت بند کو حمایت دے رہی اترپردیش کی اہم اپوزیشن سماجوادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے بڑھتی مہنگائی پر حکومت پر حملہ بولا۔ اکھلیش یادو نے کہا، ’’بی جے پی فخر محسوس کر رہی ہوگی کہ آج اپوزیشن نے بند کی کال دی ہے اس کے باوجود تیل قیمتوں میں اضافہ کیا گیا ہے۔ انہوں طنزیہ انداز میں کہا، ’’حکومت یہ بھی کہہ سکتی ہے کہ مہنگائی بڑھنے سے ملک میں ترقی آئے گی۔‘‘

بی جے پی نے بھارت بند کو ناکام قرار دیا ہے۔ بی جے پی رہنما اور مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے کہا، ’’بھارت بند نہیں ہوگا بلکہ آگے بڑھتا رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ عظیم اتحاد کا غبارہ جلد ہی پھوٹ جائے گا۔

اترپردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا، ’’کھسیانے اپوزیشن کے پاس کوئی حکمت عملی اور قیادت نہیں ہے، ان سے اور کیا امید کی جا سکتی ہے!۔‘‘

ادھر، بھارت بند کے دوران دہلی کے پریت وہار علاقہ میں لوگوں نے بیل گاڑی اور موٹر سائیکل کے ساتھ مظاہرہ کیا۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!