Published From Aurangabad & Buldhana

اے ایم یو کے ایک اور طالب علم کے دہشت گرد بننے کی رپورٹ کو جموں و کشمیر پولیس نے کیا مسترد

سرینگر: جموں و کشمیر پولیس نے بارہمولہ کے رہنے والے علیگڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) کے ایک اور طالب علم کے دہشت گرد بننے کی رپورٹ کو مکمل طورپر مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ نوجوان مہاراشٹر میں ملازم ہے۔ پولیس کے ایک ترجمان نے ٹو ئٹ کیا’’میڈیا کے ایک حصے میں آ رہی بارہمولہ رہائشی مزمل حسین کے اے ایم یو سے لاپتہ ہونے کی اطلاع غلط ہے اور ان رپورٹوں کو مسترد کیا جاتا ہے۔ یہ نوجوان مہاراشٹر کے ناگپور میں اکتوبر 2016 سے منرل ایکسپلوریشن کارپوریشن لمٹیڈ ( ایم ای سی ایل ) میں ملازم ہے‘‘۔
کپواڑہ رہائشی اے ایم یو کے ریسرچ طالب علم منان بشیر وانی کے دہشت گرد تنظیم حزب المجاہدین میں شامل ہونے کے کچھ ہی دن بعد مزمل بھی دہشت گرد تنظیم کے ساتھ ہاتھ ملانے کی رپورٹ آئی تھی۔منان کے والدین، بہن اور رشتہ داروں نے اس سے گھر واپسی کی اپیل کی ہے۔
بشکریہ نیوز 18

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!