Published From Aurangabad & Buldhana

اورنگ آباد: گھاٹی میں ادویات کی قلت دورکرنے کیلئے ایم این ایس کابھیک مانگواحتجاج

اورنگ آباد: ۱۱؍اکتوبر ( اسٹاف رپورٹر )گزشتہ ایک ماہ سے سرکاری گھاٹی اسپتال میں ادویات کی قلت کے سبب مریضوں اوران کے رشتہ داروں کونجی میڈیکل اسٹورس سے ادویات وانجکشن خریدنے پرمجبورہوناپڑرہاہے۔انہیں کافی معاشی مشکلات کاسامناکرناپڑرہاہے۔ آج ایم این ایس کی جانب سے جوبلی پارک تا گھاٹی اسپتال بھیگ مانگواحتجاج کیاگیا۔اس سے جمع شدہ رقم کو گھاٹی انتظامیہ کے سپردکیاگیاتاکہ وہ ادویات خریدسکے اور مریضوں میں تقسیم کرسکے۔ایم این ایس کامانناہے کہ ایک سال سے گھاٹی اسپتال میں ادویات کی شدید ترین قلت محسوس کی جارہی ہے۔ اس کے علاوہ بارہا مشنریز خراب ہورہی ہیں۔جس کے سبب دوردراز علاقہ جات کے ضرورتمندوغریب مریضوں کو نجی لیباریٹری ومیڈیکل اسٹورس کارخ کرنا پڑرہاہے۔ جس کے سبب ان پرمعاشی بوجھ بڑھ رہا ہے۔ اس موقع پرایم این ایس نے کئی این جی اوز سے مطالبہ کیاکہ وہ اسپتال کامالی تعاون کرے۔

انتظامیہ بھی گزشتہ کچھ دنوں سے ادویات کی قلت پرقابوپانے کیلئے شعبہ صحت میں کارگر این جی اوز سے مطالبہ کررہے ہیں وہ ادویات فراہمی کیلئے بجٹ عطاکرے ۔ایسانہیں ہے کہ انتظامیہ نے ادویات فراہمی کیلئے حکومت سے بجٹ کامطالبہ نہیں کیا۔حکومت کی بے رخی اورانتظامیہ کی لاپرواہی کے سبب گھاٹی اسپتال کے حالات بدترہوتے جارہے ہیں۔اسطرح کاالزام بھی ایم این ایس کی جانب سے عائدکیاگیا۔ ایم این ایس کارکنان نے بھیک مانگواحتجاج کرکے انتباہ دیاکہ اگراندرون پندرہ یوم حکومت ادویات کیلئے بجٹ فراہم نہیں کرتی ہے توشدید ترین احتجاج کیا جائیگا۔ اس موقع پر شہر صدر سنکیت شیٹے‘ ضلع سیکریٹری ریاض پٹیل‘ وشال آمراؤ‘نائب صدر سشانت بھجنگے‘ وشال پاٹل‘ گنیش ڈھگے‘ سہیل پٹھان‘ شیوناتھ پیرکر‘ پانڈورنگ سابلے‘اشوتوش پاٹل اورآنند بھسے موجودتھے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!