Published From Aurangabad & Buldhana

اورنگ آباد: ناجائز تعلقات کی وجہ سے ایک آدمی کے قتل میں 3بھائی گرفتار

اورنگ آباد:۔ شہر کی دیہی پولس نے کل تین بھائیوں کو ان میں سے ایک کی بیوی کے ساتھ ناجائز تعلقات کی وجہ سے ایک چالیس سالہ آدمی کے قتل کے الزام میں گرفتار کرلیا ہے۔

ملزمین کی پہچان نیمی ناتھ پانڈورنگ راوت (عمر 31)، دیوی داس (عمر 38) اور بھیبیشن (عمر 24) بتائی گئی ہے جو کہ گاڑھے جلگاؤں کے ساکنان ہیں اور یہ کرماڑ پولس تھانہ کی حد میں آتا ہے۔ گرفتاری کے بعد آج انھیں عدالت میں پیش کیا گیا جس کے بعد عدالت نے انہیں17؍ جولائی تک پولس کسٹڈی میں روانہ کردیا ہے۔

اورنگ آباد دیہی پولس کی SPآرتی سنگھ نے کہا کہ ملزمین نے ماجد بیبن شیخ کے قتل کا اقبال جرم کرلیا ہے۔آرتی سنگھ نے کہا کہ ماجد کی لاش مل گئی ہے جسے کرماڑ ریلوے ٹریک کے پاس کی لاہوکی ندی میں پھینک دیا گیا تھا۔ پولس نے کہا کہ ماجد جو کہ اسی گاؤں کا رہنے والا تھا، وہ منگل کی رات 9بجے اپنے گھر سے نکلا اور دیر رات تک گھر نہیں لوٹا۔ اور اگلے ہی دن بدھ کی صبح اس کی لاش زخموں کے ساتھ ندی میں ملی۔
مقتول کے 80سالہ والد نے اپنے بیٹے کے لاپتہ ہونے کی شکایت درج کروائی تھی۔ جانچ کے دوران پولس کو معلومات ملی کہ راوت نے ماجد کا قتل کیا ہے۔ اس کے بعد تینوں بھائیوں کو گرفتار کیا گیا اور پوچھ تاچھ کے دوران انہوں نے اقبال جرم کرلیا۔

پولس کے مطابق نیمیناتھ نے دیویداس کی بیوی کو ماجد کے ساتھ دیکھا ۔ جسکے بعد اس نے ان دونوں کو مارا اور اس معاملہ کو اپنے دونوں بھائیوں کو بتایا۔ مقامی کرائم برانچ کے انسپیکٹر سبھاش بھوجنگ نے بتایا کہ تینوں نے ماجد کو لکڑی اور لوہے کی سلاخ سے بری طرح مارااور ثبوت مٹانے کی کوشش میں لاش کو ندی میں پھینک دیا۔ پولس نے کہا کہ اس تینوں نے لاش کو جلاکر ختم کرنے کی بھی کوشش کی لیکن اس ڈر سے کہ گاؤں والوں کو پتہ چل جائیگا تو اسے آدھے ہی میں روک دیا۔
پولس نے کہا کہ دیوی داس نے قبول کرلیا ہیکہ اس نے ماجد کو دور روہنے کی تنبیہ کی تھی لیکن اس نے اس کی بات نہیں مانی تھی۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!