Published From Aurangabad & Buldhana

اورنگ آباد: شہر پولس میں بڑی تبدیلیاں، تقریباً 217 پولس اہلکار کے تبادلے

اورنگ آباد:- آج شہر میں تقریباً 217 پولس اہلکاروں کے تبادلے ‘جنرل ٹرانسفر’ (GT) کے تحت شروع کیے گئے ہیں۔
ان تبادلوں سے زیادہ تر پولس اہلکار تو خوش ہیں اس کئے کہ ان تبادلوں میں انکی دی گئی درخواست کا خیال رکھا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق کانسٹیبل کی سطح کے ‘جنرل ٹرانسفر’ کا یہ عمل انچارج پولس کمشنر ملند بھارمبے کے ہاتھوں پر ہی شروع ہو چکا تھا۔ بلکہ بدھ کے دن کے حکم نامے انہیں کی دستخطوں سے دیے گئے تھے۔ آج کیے گئے 217 پولس تبادلوں میں 172 کا شہر کے مختلف پولس اسٹیشن میں تبادلے ہو چکے ہیں اور 49 پولس والوں کی انکی صحت و دیگر وجوہات کو ذہن میں رکھتے ہوئے انکی پرانی جگہوں پر رکھا ہے۔
ان تبادلوں کی تصدیق کرتے ہوئے نائب پولس کمشنر دیپالی دھاٹے نے کہا کہ ان تبادلوں کا سلسلہ شروع کیا جا چکا ہے۔ جس میں ‘جنرل ٹرانسفر’ کے تحت 217 تبادلے ہونے ہیں۔ دھاٹے کے مطابق اس منصوبہ کے تحت پولس نائب انسپیکٹرس، معاون انسپیکٹرس اور انسپیکٹرس جسمیں پولس تھانے کے چیف بھی شامل ہیں کا تبادلہ اس ہفتہ کیا جائیگا۔
ذرائع کے مطابق وہ پولس اہلکار جنکی اپنی موجودہ جگہ پر 6 سال سے زائد سروس ہو کی ہے انکے تبادلے GT کے تحت ہونگے۔ جبکہ نائب پولس انسپیکٹرس اور ان سے اوپر کے افسران کا ایک پولس تھانہ میں وقت دو سال کا ہوتا ہے۔
ان جنرل ٹرانسفرس میں سب کی نظریں اہم خالی جگہوں پر ہے جیسے کے کرائم برانچ کے پولس انسپیکٹر کا عہدہ۔ ساتھ ہی تقریباً پولس تھانوں کے چیف کی ترقیاں، تبادلے و سبکدوشی ہونے پر ان تھانوں کو نئے تھانہ چیف ملنے والے ہیں۔ پولس تھانے جیسے جنسی، سٹی چوک، ستارا پریسر، سڈکو، ویدانت نگر اور مکندواڑی کو نئی چیف ملنے کی امید ہے۔ساتھ ہی نظریں معاشی جرائم ونگ، کرائم برانچ، شہر اور دیگر کے معاون پولس کمشنر کے عہدوں پر ہیں۔ معاشی جرائم ونگ کے معاون پولس کمشنر کا عہدہ ایک لمبے عرصے سے خالی ہے۔ ساتھ ہی کرائم کے معاون پولس کمشنر کی فرسودگی و بڑھاپے سے تبادلہ ہونا ہے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!