Published From Aurangabad & Buldhana

اورنگ آباد: شہر میں ہوئے حالیہ فساد کے بعد 3000لوگوں پر کیس درج

چار دن بعد انٹرنیٹ سروس دوبارہ شروع، پولس کی غلطیوں کی شہر کمشنر کرینگے جانچ

اورنگ آباد:۔ شہر میں جمعہ کی رات ہوئے فساد کے چار دن بعد بھی شہر میں تناؤ کا ماحول بنا ہوا ہے۔ آج ہی پولس کی جانب سے کاروائی میں جب شیو سینا کارپوریٹر جنجاڑ کو پوچھ تاچھ کے لئے پولس لے جارہی تھی تو دوبارہ شہر کے مختلف علاقوں میں تناؤ پھیل گیا تھا۔ اس فساد کے چار دن بعد انتظامیہ کی جانب سے بند موبائیل انٹرنیٹ کو دوبارہ شروع کردیا گیا اور اس فساد کے معاملہ میں تقریباً3000لوگوں پر مقدمات درج کیے گئے ہیں۔
واضح ہو کہ اس فساد میں ایک 17سالہ نوجوان اور 65سالہ بزرگ کی موت ہوگئی تھی اور 60سے زائد افراد زخمی ہوئے تھے۔اس فساد میں مختلف ویڈیو سامنے آنے کے بعد جس میں پولس کو شرپسندوں کا ساتھ دیتے دکھایا گیا تھا، ریاست کے ایڈیشنل DGPبپن بہاری نے اس بات کا اقرار کیا کہ فساد کو روکنے میں پولس ناکام رہی ہے لیکن وہ خاطیوں کے خلاف سخت کاروائی کریگی۔پولس افسران کی غلطیوں اور شرپسندوں کا ساتھ دینے کے معاملہ کی شہر کے انچارج پولس کمشنر ملند بھارمبے کرینگے۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!