Published From Aurangabad & Buldhana

اورنگ آباد: بی جے پی میں شامل ہوجاﺅں گا اور مجھے وزارت ملے گی: ایم ایل اے عبدالستار

اورنگ آباد:سابق کانگریس لیڈر عبدالستارجو کے سلوڑ سے کانگریس کے ممبر اسمبلی کے طور پر چن کر آتے تھے نے کل کہا کہ وہ بی جے پی میں جل ہی شمولیت اختیار کریں گے اور انہیں مہاراشٹر کی بی جے پی حکومت میں وزیر کا عہدہ ملے گا۔

سابقہ دنوں کانگریس کے ©ضلع صدر کے عہدہ سے استعفیٰ دینے اور پھر کانگریس چھوڑنے کے بعد سے جاری افواہیں اب صحیح ثابت ہوگئی ہیں۔پارٹی لیڈران و کارکنان کی جانب سے مستقل مخالفت کے باوجود بی جے پی میں عبدالستار کی شمولیت کی باتیں گھوم رہیں تھیں۔ افواہیں ایسی بھی تھیں کہ عبدالستار آنے والے اسمبلی انتخابات میں اپنے علاقہ سے آزاد امیدوارکے طور پر الیکشن لڑ کر پھر بی جے پی میں شامل ہونے والے ہیں۔

صحافیوں سے بات کرتے ہوئے عبدالستا ر نے بتایا کہ ” 14جون کو رادھا کرشنا وکھے پاٹل اور دیگر کے ساتھ بی جے پی میں شمولیت اختیار کریں گے اور پھر اگلے دو دنوں میں ریاستی وزارت میں بھی شامل ہوجائینگے۔ فلحال میں اپنی بیٹی کی شادی میںمصروف ہوں جو کہ 23جون کو ہے۔ میں یہ بات واضح کردوں کہ میں صرف بی جے پی میں شامل نہیں ہو رہا ہوں بلکہ ریاستی وزیر بھی بنوں گا“۔

عبدالستار کے مطابق وہ کسی خاص شعبہ کی وزارت کا مطالبہ نہیں کریں گے اس لئے کہ انہیں انکے اسمبلی حلقہ میں انتخابات کے لئے دھیان دینا ہے۔اگر عبدالستار بی جے پی میں شمولیت اختیار کرتے ہیں تو حال میں ایسا کرنے والے وہ پہلے مسلم ممبر اسمبلی ہونگے۔ واضح ہوکہ سابق وزیر اعلیٰ اشوک چوان کے انتہائی قریبی مانے جانے والے عبدالستار نے لوک سبھا انتخابات میں کانگریس کی جانب سے اورنگ آباد سے سبھاش جھامبڑ کو ٹکٹ دیے جانے کے نام پر کانگریس سے استعفیٰ دے دیا تھا۔احتجاج میں عبدالستار نے بطور آزاد امیدوار اپنی امیدواری بھی داخل کی تھی لیکن بعد میں بی جے پی کے ریاستی صدر راﺅ صاحب دانوے کے داماد اور اورنگ آباد سے آزاد امیدوار ہرشوردھن جادھو کی حمایت میں اپنی امیدوار واپس لے لی تھی۔

واضح ہو کہ عبدالستار اس سے قبل کانگریس ۔ این سی پی کی ریاستی حکومت میں تھوڑے وقت کے لئے وزیر رہ چکے ہیں۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!