Published From Aurangabad & Buldhana

اشون، ایشانت، بمراہ کی عمدہ گیندبازی، آسٹریلیا 191رن پر 7 وکٹ

ایڈیلیڈ: آف اسپنر روی چندرن اشون کی قیادت میں گیند بازوں کی شاندار کارکردگی کی بدولت ہندستان نے پہلے کرکٹ ٹسٹ کے دوسرے دن یہاں ایڈیلیڈ اوول میں جمعہ کو آسٹریلیا کی پہلی اننگز میں 191 رنز پر اس کے سات وکٹ اکھاڑ کر میزبان ٹیم کو پست کر دیا۔ہندستانی کرکٹ ٹیم نے پہلی اننگز میں 88 اوور میں 250 رن بنائے ۔ صبح ٹیم کا باقی واحد وکٹ محمد سمیع کے طور پر گرا جو دن کی پہلی ہی گیند پر کل کے اپنے ا سکور (06 رنز) پر جوش ہیزل وڈ کا شکار بنے ۔ اس کے بعد میدان پر اتری آسٹریلیائی ٹیم کے بلے بازوں کو بھی مشکل ایڈیلیڈ اوول کی پچ پر خاص مدد نہیں ملی اور دن کے اختتام تک 88 اوور میں 191 رن جوڑ کر اس نے اپنے سات وکٹ گنوا دیئے ۔ آسٹریلیا اب ہندستان کے اسکور سے 59 رن پیچھے ہے اور اس کے تین وکٹ باقی ہیں۔ بلے باز ٹریوس ہیڈ 61 رن اور مشیل اسٹارک 08 رنز بنا کر کریز پر ہیں۔ پہلے دن آسٹریلوی بولروں کی طرح دوسرے دن ہندستانی بولر میدان پر غالب نظر آئے جس میں سب سے کامیاب تجربہ کار اشون رہے جنہوں نے 33 اوور میں 1.51 کے بہترین اکونومي ریٹ سے 50 رن دے کر تین وکٹ نکالے ۔ فاسٹ بولر ایشانت شرما کو 15 اوور میں 31 رن اور جسپریت بمراہ کو 34 رن پر دو دو وکٹ ہاتھ لگے ۔ہندستانی بلے بازوں خاص طور اوپننگ آرڈر کی طرح آسٹریلوی ٹیم کے بلے بازوں کی بھی حالت نظر آئی جنہیں میچ میں آغاز سے کافی جدوجہد کرتے دیکھا گیا اور ٹیم کے اسٹار اوپنر آرون فنچ تین گیندوں بعد ہی کھاتہ کھولے بغیر ایشانت کی گیند پر بولڈ ہو گئے ۔ مارکس ہیرس اور عثمان خواجہ نے پھر دوسرے وکٹ کے لئے 45 رن جوڑے ۔ لیکن اس شراکت کو اشون نے توڑتے ہوئے ہیرس کو مرلی وجے کے ہاتھوں کیچ کرا دیا۔ہیرس نے 57 گیندوں میں تین چوکے لگا کر 26 رن بنائے لیکن دوسرے سرے پر وکٹ گرتے رہے اور شان مارش 19 گیندوں میں صرف دو رنز بنا کر اشون کی گیند پر بولڈ ہو گئے ۔ آسٹریلیا نے 59 رن پر اپنے تین اہم وکٹ گنوا دیئے ۔ عثمان خواجہ نے 125 گیندوں کھیل کر دیر تک ٹکنے کا جذبہ دکھایا لیکن وہ اننگز میں صرف 28 رنز بنا پائے اور اشون نے انہیں وکٹ کیپر رشبھ پنت کے ہاتھوں کیچ کراکر میچ میں اپنا تیسرا وکٹ حاصل کر لیا۔مڈل آرڈر میں پیٹر ھیڈاسکوب اور ہیڈ نے مل کر پانچویں وکٹ کے لئے 33 رن کی ساجھے داری کی اور بورڈ پر کچھ رنز شامل کرنے کی کوشش کی۔ ہندستانی گیند بازوں نے کافی کنجوسی سے رن دیئے جس کی وجہ سے آسٹریلوی بلے باز مسلسل رنز کے کیلئے جدوجہد کرتے نظر آئے ۔ ھیڈاسکوب نے 93 گیندوں کی اننگز میں پانچ چوکے لگا کر 34 رن بنائے لیکن 58 ویں اوور میں فاسٹ بولر بمراہ نے انہیں پنت کے ہاتھوں کیچ کراکر آسٹریلیا کا پانچواں وکٹ نکال دیا۔آسٹریلیا نے 120 رنز پر اس کے پانچ وکٹ گنوا دیئے ۔ کپتان ٹم پین بھی سستے میں آؤٹ ہوئے اور 20 گیندوں میں ایک چوکا لگا کر صرف پانچ رن بنا سکے ۔ آسٹریلیا میں اچھا تجربہ رکھنے والے ایشانت نے پنت کے ہاتھوں کیچ کراکر پین کو سستے میں پویلین بھیج دیا۔اگرچہ ہیڈ نے جدو کہد بھری اننگز کھیلتے ہوئے 149 گیندوں میں چھ چوکوں کی مدد سے 61 رن بنائے اور ایک سرا سنبھالے رکھا۔ پیٹ کمنز دن کے آخری اور آسٹریلیا کے ساتویں بلے باز کے طور پر آؤٹ ہوئے ۔ انہیں بھی اپنے 10 رن تک پہنچنے کے لئے 47 گیندوں کا سامنا کرنا پڑا۔ لیکن انہوں نے ہیڈ کے ساتھ ساتویں وکٹ کے لیے 50 رنز کی مفید نصف سنچری شراکت کھیل کر ٹیم کو کچھ سنبھالا۔فاسٹ بولر بمراہ نے کمنز کو آؤٹ کر اپنا دوسرا وکٹ نکالا۔ ہیڈ نے مشکل حالات کے باوجود کیریئر کے تیسرے ٹیسٹ میں اپنا دوسری اور اہم نصف سنچری مکمل کی۔ دوسرے دن آسٹریلیا کی اننگز میں واحد نصف سنچری بنانے والے ہیڈ نے 103 گیندوں میں پانچ چوکے لگا کر اپنے 50 رن پورے کئے ۔ فی الحال ان کے ساتھ دوسرے سرے پر اسٹارک آٹھ رن پر ناٹ آؤٹ ہیں۔اس سے پہلے صبح ہندستان نے اپنی پہلی اننگز کا آغاز کل کے 250 رن پر نو وکٹ سے آگے کیا ۔ اس وقت بلے باز محمد سمیع 06 رنز پر ناٹ آؤٹ تھے ۔ سمیع ہیزل وڈ کی پہلی گیند پر ٹم پین کو کیچ دے بیٹھے اور ہندوستانی اننگز 250 رن پر سمٹ گئی۔آسٹریلیا کے لیے فاسٹ بولر ھیزلوڈ کو 20 اوور کی گیند بازی میں 52 رن پر تین وکٹ ملے ۔ اسٹارک نے 63 رن، کمنز نے 49 رنز اور ناتھن لیون نے 83 رن دے کر دو دو وکٹ لئے ۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!