Published From Aurangabad & Buldhana

اترپردیش : آئی پی ایس افسر نے رام مندر بنانے کا لیا حلف ، ویڈیو وائرل ، فرقہ پرستی کو فروغ دینے کا الزام

لکھنؤ۔یوپی کے سینئر آئی پی ایس افسر کا ویڈیو وائرل ہوا ہے۔جس میں وہ رام مندر بنانے کا حلف لیتے نظر آرہے ہیں۔ویڈیو لکھنؤ یونیورسٹی میں منعقد ایک پروگرام کا ہے۔اس میں ڈٰ جی ہوم گارڈ کے عہدے پر تعینات آئی پی ایس افسر سوریہ کمار شکلا نظر آرہے ہیں۔

کچھ دن پہلے لکھنؤیونیورسٹی مسلم کار سیوک منچ کے ذریعہ منعقد’اکھل بھارتیہ سمرگ وچار پرشٹھ’پروگرام میں کچھ لوگ رام مندر بنانے کیلئے حلف لے رہے تھے۔ان میں افسر سوریہ کمار شکلا کے علاوہ مسلم کار سیوک منچ کے صدر اعظم خان اور کئی دیگر لوگ موجود تھے۔ سوریہ کمار شکلا یوپی کیڈر کے 1982بیچ کے آئی پی ایس افسر ہیں اور ڈی جی ہوم گارڈ کے عہدے پر تعینات ہیں۔

ٖڈی جی سطح کے افسر کی اس کی حرکت سے ان پر فرقہ پرستی کو فروغ دینے کے الزام لگ رہے ہیں۔سوال اٹھ رہے ہیں کہ جب سینئر عہدوں پر بیٹھے افسر ہی اس طرح کا مذہبی وبال پھیلائیں گے اور سپریم کورٹ کے احکام کو نظر انداز کریں گے تو ریاست میں امن کا نظام کیسے برقرار رکھا جئیگا۔

اس موقع پر بولتے ہوئے اعظم خان نے کہا’ایودھیا میں رام مندر تعمیر کیلئے ہندوؤں کو بیدار ہونے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ اگر 100کروڑ ہندوؤں کے ہوتے ہوئے بھی رام مندر کی تعمیر نہیں ہو رہی ہے تو یہ سوچنے کی بات ہے۔انہوں نے کہا کہ میں ایک بھکت ہونے کے ناطے یہاں آیا ہوں کورٹ میں رام مندر کا مسئلہ جانا بھی اچھی بات نہیں ہے’۔

اعظم خان نے کہا "رام یوپی کے ہیں اس لئے یہاں کے لوگوں میں ان کو لیکر بیداری نہیں ہے۔ساؤتھ اور گجرات کے ہندوؤں کو جاکر دیکھو وہ رام میں کتنی عقیدت رکھتے ہیں”۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!