Published From Aurangabad & Buldhana

اب کی بار پیٹرول 86 کے پار، واہ بھئی مودی سرکار

پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں ہونے والا اضافہ رکنے کا نام ہی نہیں لے رہا اور آج کے اضافہ کے ساتھ ممبئی میں پیٹرول86 کے پار ہو گیا ہے ، جو اپنے آپ میں ایک ریکارڈ ہے۔

عوام اب اچھے دن کے آنے کی دعا نہیں کر رہی بلکہ اس کی اب دعا ہے کہ برے دن کسی طرح رک جائیں کیونکہ ہر تیسرے دن اس کو یہ خبر سننے کو ملتی ہے کہ تیل کی قیمتوں میں اتنے پیسوں کا اضافہ ہو گیا ہے اور ڈالر کے مقابلہ روپے کی قیمت مزید کم ہو گئی ہے۔ آج پھر خبر آئی ہے کہ دہلی میں پیٹرول کی قیمتوں میں ۳۱ پیسے فی لیٹر اور ڈیزل کی قیمتوں می ۳۹ پیسے فی لیٹر اضافہ ہوا ہے ۔ دہلی میں اب نئی قیمتوں کے حساب سے پیٹرول کی نئی قیمت79.15 روپے فی لیٹر ہو گئی ہے اور ڈیزل کی71.15 روپے فی لیٹر ہو گئی ہے۔ اس کے ساتھ ڈیزل کے ریٹ ایک نئے ریکارڈ پر پہنچ گئے ہیں ۔

ادھر ممبئی میں تو پیٹرول کے ریٹ86.56 روپے فی لیٹر پار کرگئے ہیں جو اپنے آپ میں ایک ریکارڈ ہے۔ ممبئی میں دڈیزل کے ریٹ 75.54 روپے فی لیٹر ہو گئے ہیں ۔ ادھر مغربی بنگال کی راجدھانی کولکتہ میں پیٹرول82.06 روپے فی لیٹر اور ڈیزل کی قیمت74 روپے فی لیٹر ہے ۔

پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ کی بڑی وجہ ڈالر کے مقابلہ روپے کی گرتی قیمت ہے اور دوسری جانب عالمی منڈی میں کچے تیل کی قیمتوں میں بھی لگاتار اضافہ ہو رہا ہے ۔ اگر حکومت عالمی منڈی کی جانب دیکھتی رہی تو اس سے کوئی راحت نہیں ملنے والی ہے۔ حکومت کو قومی اور ریاستی ستح پر کچھ اقدام اٹھانے پڑیں گے تاکہ عوام کو ان بڑھتی قیمتوں سے راحت مل سکے لیکن حکومت کی جانب سے ایسی کوئی پیش رفت نظر نہیں آرہی۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!