Published From Aurangabad & Buldhana

آٹھ ماہ میں574کسانوں کی خودکشی

اورنگ آباد: ۲۳؍ اگست ( م خ)فصل کی بربادی‘ بینکوں وساہوکاروں کے قرض کے بوجھ‘ گھریلوذمہ داریوں کی انجام دہی کی فکر سے عاجز آکر گزشتہ آٹھ ماہ میں 574کسانوں نے خودکشی کرلی ہے ۔سب سے زائد خودکشی کے واقعات موسم باراں کے مہینوں جون جولائی اوراگست کے درمیان رونماہوئے ہیں۔کھیت میں زہر پینا‘پھانسی لینا‘ کنویں میں چھلانگ لگانا‘اسطرح کے طریقہ کاراپناکر کسانوں نے خودکشیاں کی ہیں۔بیڑضلع میں سب سے زائد ۱۱۵؍ کسانوں نے خودکشی کی ہے ۔

جبکہ اورنگ آبادمیں ۸۱؍ کسانوں نے اپنی جان دے دی ہے۔یہ اعدادوشمارنہایت تشویشناک ہیں۔ گزشتہ چھ سال میں تقریبا چارہزارسے زائدکسانوں نے مراٹھواڑہ میں خودکشی کی ہے ۔خودکشی کرنے والے کسانوں کے ورثہ کوحکومت کی جانب سے فی کس ایک لاکھ کی امداددی جاتی ہے ۔

ان خودکشی کے واقعات میں345معاملات امدادکے اہل قرارپائے۔جنہیں ۳؍کروڑ ۳۳؍لاکھ کی مدددی گئی ہے۔اگرحکومت کسانوں کے مسائل کے یکسوئی میں سنجیدگی کامظاہرہ کرے اوران کی پیداوارکوبہترنرخ دے تویہ اعدادوشمار کم ہوسکتے ہیں۔

You might also like

Subscribe To Our Newsletter

You have Successfully Subscribed!